Code : 4058 6 Hit

پورا کشمیر جیل بنا دیا گیا ہے:سابق ہندوستانی وزیر خزانہ

سابق ہندوستانی وزیر خزانہ نے کشمیر کے سلسلہ میں نئی دہلی حکومت کی پالیسیوں کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی وزیر اعظم نے پورے کشمیر کو ایک بڑی جیل میں تبدیل کردیا ہے۔

ولایت  پورٹل:ای آرآرسی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق  سابق  ہندوستانی وزیر خزانہ اور کانگریس پارٹی کے سینئر ممبر پی چدم برم نے نئی دہلی حکومت کی طرف سے کشمیر کی خودمختاری کے خاتمے کی پہلی برسی کے موقع پر اعلان کیا کہ اگر کشمیر کی موجودہ صورتحال ختم نہیں ہوتی ہے اور اس خطے کا مستقبل طے نہیں ہوتا ہے تو کشمیری باشندوں کی تقدیر تکلیف دہ ہوگی، انہوں نے کہا کہ ہندوستانی وزیر اعظم نریندر مودی کی حکومت نے پورے کشمیر کو ایک بڑی جیل میں تبدیل کردیا ہے اور یہ لوگوں کے لئے تباہی کی طرح ہے۔
چدم برم نے کہا کہ ہندوستان نے تقریبا ایک سال قبل جب سے کشمیریوں کی خود مختاری کا خاتمہ کیا ہے اس کے بعد سے اب تک سیکڑوں کشمیری ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں، ممتاز ہندوستانی سیاستدان نے کہا  کہ کشمیریوں  کے سلسلہ میں آزادی اظہار رائے پر بھی شدید دباؤ ڈالا جاتا ہے اور ہمیں یہاں تک کہ کشمیری متاثرین کی تعداد کا اعلان کرنے یا جاننے کی اجازت نہیں ہے، سابق ہندوستانی وزیر خزانہ نے زور دے کر کہا کہ نئی دہلی  اپنے فیصلے کے خلاف عوامی مظاہروں سے واقف تھی اسی لیے اس نے طویل عرصے تک کشمیر میں موبائل فون سگنلز اور یہاں تک کہ ٹی وی بھی بند کردیئے تھےجس سے لاکھوں مسلمانوں کو بیرونی دنیا سے منقطع ہوگیا تھا۔
انہوں نے مزید کہاکہ ہندوستان کی جانب سے  کشمیر میں چلائی جانے والی پالیسی پائیدار نہیں ہوگی اور آئندہ نسلوں کے لئے فائدہ مند نہیں ہوگی، ہم صرف اتنا کہہ سکتے ہیں کہ اس پالیسی نے ملک کو بہت زیادہ نقصان پہنچایا ہے، قابل ذکر ہے کہ ہندوستان نے ایک سال قبل کشمیر کی خودمختاری کو کالعدم قرار دیا تھا اور گذشتہ معاہدوں کی خلاف ورزی کرکے کشمیر کو عملی طور پر اپنی سرزمین کا حصہ بنانے کی کوشش کی تھی۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین