صیہونی فوجی دہشتگردوں کی بے گناہ فلسطینی قیدیوں پر یلغار

قابض صہیونی فوج نے گذشتہ روزبغیر کسی وجہ کےعوفرجیل میں قید فلسطینی قیدیوں پر حملہ کرکے ان پر آنسوگیس کے گولے داغے۔



 
 
 

ولایت پورٹل:فلسطینی قیدیوں کے نگران کلب کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ بدھ کے روز قابض فوج کی بھاری نفری 'عوفر' جیل میں گھس گئی اور قیدیوں کے کمروں کی تلاشی کی آڑ میں تمام کمرے سیل کردیے، اس کے بعد جیل کے وارڈ نمبر 21 اور 22 میں تلاشی کے دوران قیدیوں پر اشک آور گیس کی شیلنگ کی۔
کلب کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوج کی طرف سے قیدیوں پر تشدد میں اضافہ ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جبکہ کرونا کی وبا کی وجہ سے قابض حکام نے قیدیوں پر سختیاں پہلے ہی بڑھا دی ہیں۔
قیدیوں کے نگران کلب کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوج کا کسی احتیاطی تدبیر کے بغیر جیل پر اس طرح دھاوا قیدیوں میں کرونا وبا پھیلانے کی منظم کوشش ہوسکتا ہے، بیان میں کہا گیا ہے کہ اسرائیل کی کئی جیلوں میں جیلروں اور قیدیوں میں کرونا پھیلنے کی اطلاعات ہیں، ایسے میں صہیونی فوج کا فلسطینی قیدیوں کے ساتھ ناروا سلوک، ان کے کمروں میں گھس کر تلاشی کی آڑ میں قیدیوں کو زدو کوب کرنا صہیونی فوج کی منظم چال کی عکاسی کرتا ہے
عوفر جیل میں فلسطینی قیدیوں پر تشدد کا یہ پہلا موقع نہیں، گذشتہ برس اسرائیلی فوج نے اسی جیل پر کئی بار چھاپے مارے اور قیدیوں کو بدترین تشدد کانشانہ بنایا گیا تھا،یادرہے کہ  عوفر جیل میں بچوں سمیت 800 فلسطینی پابند سلاسل ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین