آپ ہر ملک میں مداخلت کریں اور کوئی مذمت بھی نہ کرے؛سید حسن نصراللہ کا امریکہ اور مغربی ممالک سے خطاب

لبنان کی عوامی اور انقلابی تحریک حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل نے کل ماہ محرم کی تیسری شب کی مناسبت سے اپنے خطاب میں امریکہ کی جانب سے جنگ کی آگ بھڑکانے پر متنبہ کیا۔

ولایت پورٹل:آئی آر آئی بی کی رپورٹ کے مطابق لبنان کی عوامی اور انقلابی تحریک حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل سید حسن نصرالله نے اپنے خطاب میں امریکہ اور بعض مغربی اور عرب ممالک کی جانب سے خطے کے داخلی امور میں مداخلت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے امریکی حکام کو متبنہ کیا کہ آپ نے تو اپنے آپ کو ملکوں کے اندرونی معاملات میں مداخلت کا حق دے دیا ہے اور ملکوں کے خلاف بے انصافی سے کام لے رہے ہیں جبکہ نہ ہمیں اور نہ ہی دوسروں کو علاقے کے عوام کی خدمت کی اجازت  ہے،سید حسن نصرالله نے کہا کہ امریکہ اپنے آپ کو یہ اجازت دیتا ہے کہ وہ کسی بھی ملک پر جنگ مسلط کرے اور یمن کے حتی چھوٹے بچوں کو خاک و خوں میں غلطاں کرے لیکن کوئی بھی اس قسم کی جارحیت کی مذمت کے لئے حتی دو جملے بھی کہنے کا حق نہیں رکھتا۔
حزب اللہ کے سیکریٹری جنرل نے کہا کہ علاقے میں اسرائیل ہی برائی کی اصل جڑ اور مرکز ہے اور اگر کوئی اسرائیل کے مد مقابل آئے تو اسے فلسطین کی تاریخ اور اس کی سرزمین سے آشنا ہونا چاہئیے۔
واضح رہے کہ امریکہ  ہر ملک کے اندورنی مسائل میں مداخلت کرنےکو اپنا حق سمجھتا ہے  چاہے وہ عراق،شام ، یمن ہو یا لبنان اور اس پر اگر کوئی اس کی مذمت کرتا ہے تو اس کے خلاف چنگھاڑنے لگتا ہے چاہے وہ اس ملک کے عوام ہی کیوں نہ ہوں جیسا کہ عراق اور شام میں آئے دن دیکھنے کو ملتا ہے کہ ان ممالک کے عوام اپنی سرزمین پر امریکی غیر قانونی موجوگی کے مظاہرے کرتے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین