Code : 3877 7 Hit

یمنی فوج کا سعودی تیل تنصیبات اور فوجی اڈوں پر بیلسٹک میزائل حملہ

یمنی مسلح افواج کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ہم نے بیلسٹک میزائلوں اور ڈرونز کے ذریعہ سعودی تیل تنصیبات اور فوجی اڈوں کو نشانہ بنایا ہے۔

ولایت پورٹل:المسیرہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق یحیی سریع نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یمنی مسلح افواج نے سعودی تیل کی تنصیبات اور فوجی ٹھکانوں کے خلاف آج (پیر) صبح بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کیا جس میں یمنی افواج نے بڑے پیمانے پر کارروائی کرتے ہوئے جنوبی سعودی عرب کے جیزان ، نجران اور عسیر علاقوں میں دشمن کے متعدد ٹھکانوں اور اہم تنصیبات کو نشانہ بنایا، بیلسٹک میزائلوں اور ڈرونوں کے ذریعہ کئے گئے ان حملوں میں خمیس مشیط ،ابہا ، جیزان اور نجران ہوائی اڈوں پر پیٹریاٹ لڑاکا طیاروں کے آشیانوں نیزپیٹریاٹ میزائل دفاعی نظام کو نشانہ بنایا گیا، اسی ظرح جیزان صنعتی زون میں تیل کی بڑی تنصیبات کو نیست ونابود کردیا گیا ۔
یحیی سریع کا کہنا تھا کہ یہ حملے دشمن کی جارحیت خاص طور پر صوبہ الحجہ پر کیے جانے والے تازہ ترین دہشت گردانہ حملوں کے جواب میں نیزمحاصرہ جاری رکھنے اور "تنومہ" جارحیت کی برسی کے موقع پر کیے گئے ہیں، یمنی مسلح افواج کے ترجمان نے صوبہ مأرب میں تداوین فوجی اڈے پر سعودی کمانڈروں اور مستعفی حکومت کے عناصر کے مابین ملاقات کے دوران حملہ کرنے کی خبر دیتے ہوئے کہا کہ اس حملے میں درجنوں افراد ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں ۔
یحییٰ سریع نے دفاع کے مسلم حق کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ یمن کی آزادی حاصل ہونے تک یہ حملے جاری رہیں گے اور یمنی مسلح افواج مستقبل میں اس سے بھی تکلیف دہ آپریشن کرنے سے دریغ نہیں کریں گی، ادھر کچھ سعودی صارفین نے آج صبح سعودی عرب کے شہر خمیس مشیط اور ابہا شہر میں دھماکوں کی آواز سنائی دیے جانےکی بھی اطلاع دیتے ہوئے لکھا کہ ان دھماکوں کی آواز بہت خوفناک تھی ۔



0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین