یمنی فوج کی سعودی شہریوں سے ہوائی اڈوں اور فوجی ٹھکانوں سے دور رہنے کی اپیل

یمنی مسلح افواج کے ترجمان نے سعودی عرب کے ابھا ایئرپورٹ پر اپنے یو اے وی یونٹ پر دوبارہ حملے کا اعلان کیا اور سعودی شہریوں سے مطالبہ کیا کہ وہ ریاض کے ذریعے فوجی طور پر استعمال ہونے والے ہوائی اڈوں سے دور رہیں۔

ولایت پورٹل:المسیرہ چینل کی رپورٹ کے مطابق یمنی مسلح افواج کے ترجمان یحیی سریع نے سعودی عرب کے ابھا ایئر پورٹ پر یمنی یو اے وی یونٹ پر دوبارہ حملے کا اعلان کیا، انہوں نے مزید کہاکہ سعودی عرب کے ابھا ہوائی اڈے کو آج اتوار کی سہ پہر صماد 3 اور قاسف کے 2 کے دو ڈرونوں سے نشانہ بنایا گیا، یہ حملہ بہت درست تھا، یمنی مسلح افواج کے ترجمان نے کہاکہ یہ آپریشن سعودیوں کے وحشیانہ حملوں کا ردعمل ہے اور یہ جائز ہے خاص طور پر جب یمن کے مختلف علاقوں میں فضائی حملے جاری ہیں اور یمنیوں کا محاصرہ جاری ہے۔
 یحییٰ نے تمام سعودی شہریوں سے فوجی مقاصد کے لئے (سعودی اتحاد) کے زیر استعمال ہوائی اڈوں اوردیگر فوجی مراکز سے دور رہنے کا مطالبہ فوری طور پر دہرایا، ادھر  یمنی صماد 3 ڈرون کے ذریعہ ابہا بین الاقوامی ہوائی اڈے پر اہم فوجی اہداف کو نشانہ بنایا گیا ہے،واضح رہے کہ  سعودی عرب امریکہ کی پشت پناہی میں کچھ دیگر عرب ریاستوں کے ساتھ مل کر پچھلے چھ سالوں سے یمن کو اپنی جارحیت کا نشانہ بنا رہا ہے جس  کی وجہ سے اس اس ملک کا اسی فیصد بنیادی ڈھانچہ تباہ ہو گیا ہے اس کے علاوہ اکثر اسپتال اور طبی مراکز بھی سعودی بمباری سے مٹی کے ڈھیر میں تبدیل ہوچکے ہیں جو بچ بھی گئے ہیں ان میں دواؤں اور دیگر بنیادی سہلویات ناپید ہیں اس لیے کہ جارح سعودی اتحاد نے اس ملک کو چاروں سے اپنے محاصرہ میں لیا ہوا ہے اور عالمی برادری کو ٹس سے مس نہیں ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین