Code : 4062 10 Hit

امریکی میزائل کے خطرے کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا:روس

روس کی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ امریکی میزائل کے خطرہ کو نظرانداز نہیں کرسکتے۔

ولایت پورٹل:روسی نیوز ایجنسی تاس کی رپورٹ کے مطابق روس کی وزارت خارجہ نے پیر کے روز کہا ہے کہ دنیا بھر میں امریکی مختصر اور درمیانے فاصلے سے ہوا تک مار کرنے والے میزائلوں کی تعیناتی ایک اشتعال انگیز اقدام ہے، روسی محکمہ خارجہ نے شارٹ رینج نیوکلیئر میزائلوں کی ممانعت سے متعلق معاہدے سے امریکہ کے نکلنے کی مناسبت سے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ یہ واضح ہے کہ دنیا میں امریکی مختصر اور درمیانے فاصلے سے ہوا تک مار کرنے والے میزائلوں کو نصب کرنا علاقائی اور عالمی سلامتی کو شدید نقصان پہنچا رہی ہے،اس نے اسلحہ کی دوڑ میں ایک نیا خطرناک قدم اٹھایا ہے۔
انھوں  نے کہا کہ روس اپنے سرزمین کے خلاف مزید میزائل خطرات کے ظہور کو نظرانداز نہیں کرسکتا اس لیے کہ ہمارا ملک اسٹریٹجک اہمیت کا حامل ہے، انہوں نے کہا کہ باہمی قبول سیاسی اور سفارتی معاہدے تک پہونچنے کے لئے ہم صرف ایک ہی معقول اقدام اٹھاسکتے ہیں،وہ یہ ہے کہ  روس اعتماد کو بحال کرنے اور بین الاقوامی سلامتی اور اسٹریٹجک استحکام کو مضبوط کرنے کے لئے تیار ہےاور ہمیں ہمیں امید ہے کہ ریاستہائے متحدہ کی طرف سے بھی اسی طرح کی دلچسپی اور ذمہ داری کے احساس کا مظاہرہ کیا جائے گا۔
قابل ذکرہے کہ اس معاہدے میں مختصر فاصلے تک چلنے والے جوہری میزائل ، ریاستہائے متحدہ امریکہ اور روس کو مختصر فاصلے سے ہوا تک مار کرنے والے میزائل (1000-5000 کلومیٹر) اور مختصر فاصلے تک مار کرنے والے میزائل (100-500 کلومیٹر) کے حصول ، ان کی پیداوار یا تجربہ کرنے سے منع کیا گیا ہے لیکن کئی مہینوں تک ایک دوسرے پرمعاہدہ کی خلاف ورزی کا الزام لگانے کے بعد امریکہ اور روس باضابطہ طور پر اس سے دستبردار ہوگئے۔




0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین