Code : 3189 19 Hit

امریکہ کو افغانستان کے معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں دیں گے: طالبان

طالبان نے ایک بیان میں افغانستان کی پوری تاریخ میں غیر ملکی ممالک اور امریکہ کی اس ملک میں جنگ کا حوالہ دیتے ہوئے زور دیا کہ یہ گروپ امریکہ کو داخلی معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں دے گا۔

ولایت پورٹل: طالبان نےاپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ کے ساتھ امن معاہدے میں واضح طور پر کہا گیا ہے کہ اسے یا کسی دوسرے ملک کو افغانستان کے ملکی  معاملات میں مداخلت نہیں کرنا چاہئے۔
بیان کے مطابق ، افغانستان کے مستقبل کا فیصلہ کرنا افغانوں کا فطری حق ہے اور اس ملک  کے عوام کو اپنے ملک میں پائیدار امن کے حصول کی پوری کوشش کرنا ہوگی۔
طالبان نے یہ بھی کہا کہ تاریخ میں اب تک بہت سے ممالک نے افغانستان کے عوام سے اس حق کو چھیننے کی کوشش کی ہے اور بہت ساری تباہ کن جنگوں  کا تجربہ کیا ہے۔
طالبان  کےبیان میں اس بات پر زور دیا گیا ہے کہ انھوں نے امریکہ کے ساتھ امن معاہدے پر دستخط کیے ہیں جب کہ افغان حکومت کے ساتھ ابھی بھی ان کی لڑائی جاری ہے۔
یادرہے کہ طالبان اور امریکہ نے تقریبا دو ہفتے قبل قطر میں امن معاہدے پر دستخط کیے تھے اور اس کے بعد سے افغانستان میں دونوں فریقوں کے درمیان جنگ روک دی گئی ہے ، تاہم طالبان افغان سکیورٹی فورسز  کے خلاف حملے جاری رکھے ہوئے ہیں۔
واضح رہے کہ طالبان اور افغان حکومت کے مابین بین الافغان مذاکرات کا آغاز 10 مارچ کو ہونا تھا ، لیکن سیپدر اور ارگ کے درمیان اختلافات میں اور  اس گروپ کے زیر حراست افراد کی مشروط رہائی کے بارے میں طالبان کی مخالفت  کی وجہ سے ابھی تک یہ مذکرات امکان پذیرنہیں ہو سکے ہیں۔


1
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین