Code : 3016 84 Hit

جنگ میں ایران کی حمایت کو کبھی نہیں بھولیں گے:شام

شام کے نائب وزیر خارجہ نے کہا ہےکہ دمشق جنگ کے سالوں کے دوران ایران ، روس ، حزب اللہ اور مزاحمتی محور کی حمایت کو کبھی نہیں بھولے گا۔

ولایت پورٹل:شام کے نائب وزیر خارجہ فیصل مقداد نے جمعہ کے روزالمیادین نیوز چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ شامی قوم آج حلب دمشق شاہراہ کو دوبارہ کھولنے کے ساتھ منا رہی ہے ، جو دہشت گردوں کی موجودگی کی وجہ سے برسوں سے بند تھی۔
انہوں نے  امریکہ کی جانب سے مسلط کردہ صدی ڈیل اور جوالان پر قبضہ کو ذکر کرتے ہوئے کہا کہ آج ہماری قوم نے ایک بار پھر اپنی سرزمین اور قوم سے وابستگی ظاہر کی ہے نیز ہماری قوم  صدی کے معاہدے اور عرب قوم کے خلاف تمام سازشوں کو ناکام بنانے کے لیے لڑتی رہے گی۔
مقداد نے مزید کہا کہ شام ایک ایسی جنگ لڑ رہا ہے جسے مغربی ممالک نے اس کے خلاف دہشت گرد گروہوں کی حمایت کرکے مسلط کیا تھا۔
انہوں نے اس حقیقت کا ذکر کرتے ہوئے کہ دہشت گرد گروہوں کو ترکی کی حمایت حاصل ہے ، کہاکہ ترک نظام نے دسیوں ہزاروں دہشت گردوں کے لئے اپنی سرحدیں کھولیں اورانھیں  شام میں داخل کیا اور اردگان شام کے خلاف لڑتے ہوئے ایک اور جنگ لڑنے کے لئے لیبیا چلا گیا ہے۔
شام کے نائب وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ ترک حکومت ماسکو میں شام اور ترکی کے سکیورٹی اجلاس کے دوران  ہونے والے معاہدہ اور سوچی معاہدےنیز اس کے نتیجے میں حاصل ہونے والی مفاہمت کا احترام نہیں کرتی ہے۔
انہوں نے ترک نظام کو احمقانہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ اردگان  جیسے سانس لیتے ہیں ویسے ہی جھوٹ بولتے ہیں  اور مسلح دہشت گرد گروہوں اور ترکی اور امریکی قابضین کا مقابلہ کرنا شام کا حق ہے۔
مقداد نے مزید کہا کہ ترک حکومت کو یہ سوچنا چاہئے تھا کہ شام کی حکومت کی کسی بھی طرح کی کمزوری کا نتیجہ اس کو بھی بھگتنا پڑے گا۔






0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम