ابھی تو ہم نے صیہونیوں کو اپنی پوری طاقت دکھائی ہیں نہیں: فلسطینی مزاحمتی تحریک

غزہ میں حماس کے پولیٹیکل بیورو کے سربراہ نے کہا کہ فلسطینی مزاحمتی تحریک نے یروشلم کے عوام کی آواز پر لبیک کہتے ہوئے صیہونیوں پر میزائلوں کی بارش کی جبکہ اس جنگ میں ہم نے اپنی طاقت نہیں دکھائی۔

ولایت پورٹل:فلسطین ٹوڈےکی رپورٹ کے مطابق غزہ میں حماس اسلامی مزاحمتی تحریک کے پولیٹیکل بیورو کے سربراہ یحییٰ السنوار نے یروشلم کی تلوار کی جنگ میں فلسطینی مزاحمتی گروپوں کی شمولیت کے بارے میں بات کی،رپورٹ کے مطابق  انہوں نے اس سلسلے میں کہاکہ غزہ کی پٹی میں فلسطینی مزاحمتی گروہوں نے یروشلم کے عوام  کی آواز پرلبیک کہتے ہوئے صیہونیوں پر میزائلوں کی بارش کی  جس کےنتیجہ میں مزاحمتی گروہ تل ابیب کو بھاری نقصان پہنچانے میں کامیاب رہے۔
 غزہ میں تحریک حماس کے سیاسی دفتر کے سربراہ نے  کہا  کہ غزہ میں مزاحمتی گروہوں نے صیہونیوں کو اپنی طاقت کا صرف ایک حصہ دکھایاجس کے نتیجہ میں قدس تلوار کی لڑائی نے صیہونیوں  کے تخمینوں کے تہس نہس کر کے رکھ دیا، انہوں نے مزید کہا کہ قدس اور مسجد اقصی ہماری سرخ لکیر ہے، ہم مقبوضہ بیت المقدس اور مسجد اقصیٰ کے خلاف دشمن کو اپنی فوجی جارحیت جاری رکھنے کی اجازت ہرگز نہیں دیں گے اس لیے کارٹنگ اور بدمعاشی کی منطق اب کام نہیں آنے والی۔
انھوں نے مزید کہا کہ  ہم صہیونی قتل عام کی مخالفت کرتے ہیں، فلسطینی عہدیدار نے کہا کہ غزہ میں فتح کا جشن منانا فلسطینیوں کا حق ہے،سورڈآف قدس جنگ کی آگ قدس اور شیخ جراح کے علاقے میں ہمارے لوگوں کی چیخوں سے بھڑک اٹھی،واضح رہے کہ  فلسطین کے مزاحمتی گروہوں اور صیہونی حکومت کے مابین "سورڈ آف یروشلم" کے نام سے  شروع ہونے والی جنگ آخر کار جنگ بندی کے اعلان کے بعد جمعہ کی صبح ختم ہوگئی۔
 جیسا کہ توقع کی جارہی ہے کہ صہیونی حکومت نے اپنے بہت زیادہ گھمنڈ کے باوجود آخر کار راکٹ حملوں اور وسیع پیمانے پر مزاحمتی گروہوں کے دباؤ کے تحت جنگ بندی پر اتفاق کیا۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین