Code : 2489 45 Hit

ہم نے تو ایران کے خلاف کچھ نہیں کہا:سعودی حکام

مصر میں سعودی سفارت خانہ نے ایک بیانیہ جاری کرتے ہوئے سعودی سفیر کی جانب سے ایران کو دھمکی دیے جانے کی تردید کی ہے۔

ولایت پورٹل:سعودی سرکاری اخبار عکاظ  کی رپورٹ کے مطابق مصر کے دار الحکومت قاہرہ میں تعینات سعودی سفیر کی جانب سے عراق کی موجودہ صورتحال اور نجف اشرف  میں ایرانی قونصل خانہ پر ہونے والے حملہ کے سلسلہ میں  اظہار خیال کیے جانے کی تردید کی ہے ،مذکورہ اخبار نے لکھا ہے کہ مصر میں سعودی سفیر اور عرب لیگ میں مستقل سعودی نمائدہ اسامہ بن احمد نقلی نے حالیہ دنوں میں کسی مصری یا بیرونی ذرائع ابلاغ کو کوئی انٹرویو نہیں دیا ہے  لہذا عراق کی موجودہ صورتحال کے بارے میں ان کے بیان کی خبریں بے بنیاد ہیں،قابل ذکر ہے کہ مصری اخبار انباء الیوم نے جمعرات کو اپنی ایک رپورٹ میں لکھا ہے کہ  قاہرہ میں تعینات سعودی سفیر نے ہمارے اخبار کو دیے جانے والے انٹرویو میں ایران کو دھمکی دیتے ہوئے  کہا ہے کہ نجف اشرف میں قونصل خانہ پر ہونے والے حملوں سے بڑے حملوں کے تیار رہو،تاہم سعودی سفارت خانہ نے اس انٹرویو کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس طرح کی خبریں گڑھنا افسوسناک ہے وہ بھی خاص طور پر عراق کی صورتحال پر جبکہ سعودی عرب کی سیاست یہ ہے کہ وہ دوسرے ممالک کے اندونی مسائل میں  کسی بھی طرح کی مداخلت سے پرہیز کرتا ہے،قابل ذکر ہے کہ مصری اخبار انباء الیوم نے لکھا تھا کہ سعودی سفیر نے اس اخبار کو دیے جانے والے انٹرویو میں ایران کے خلاف اپنے پرانے الزام کو دہراتے ہوئے کہا کہ یہ ملک یمن میں باغیوں کی حمایت کرکے خطہ میں موجود بحران کو بڑھاوا دے رہا ہے نیز عراق اور لبنان کی داخلی سیاست میں بھی مداخلت کررہا ہے ۔

0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम