ہم غزہ جنگ ہار چکے ہیں؛ممکنہ صیہونی وزیراعظم کا اعتراف

صہیونی نئی کابینہ تشکیل دینے کی دعوت دیے جانے والے یائیر لاپڈ نے فلسطینیوں کے خلاف نئی جنگ میں صیہونی  حکومت کی شکست تسلیم کر لی ہے۔

ولایت پورٹل:فلسطینیوں کے خلاف نئی اشتعال انگیزی میں حکومت کی شکست کا اعتراف کرتے ہوئے ، نئی اسرائیلی کابینہ کی دعوت دیے جانے والےلاپڈ نے کہا  ہےکہ ہر ایک صیہونی پوچھ رہا ہے کہ گیارہ دن کی کاروائیوں کے نتیجہ میں اسرائیل نے کیا حاصل کیا؟لاپڈ نے مزید کہا کہ غزہ میں آپریشن کے خاتمے کے امریکی صدر جو بائیڈن کے مطالبے کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔
انہوں نے مزید کہا کہ غزہ میں تنظیموں (مزاحمتی گروہوں) نے اسرائیلی حکومت کے خلاف مغربی میڈیا کی جنگ جیت لی ہے۔
واضح رہے کہ صیہونیوں نے پچھلے گیارہ دن سے غزہ اور مغربی کنارے کے نہتے فلسطینی شہریوں کے خلاف اپنی بربریت کا آغاز کیا ہوا ہے  جس میں اب تک دسیوں فلسطینی شہید جبکہ سیکڑوں کی تعداد میں زخمی ہوگئے ہیں اور زخمی ہونے والوں میں خواتین اور بچوں کی بڑی تعداد شامل ہے جس کے جواب میں فلسطینی مزاحمتی تحریک کی جانب سے روزانہ کی بنیادپر صیہونی شہروں  بارش کی جارہی ہے جس سے صیہونیوں میں خوف وہراس کی لہر دوڑ گئی ہے اور وہ کسی بھی طرح سے اس غیر قانونی ریاست سے بھاگنا چاہتے ہیں اس لیے کہ انھیں یقین ہو گیا ہے کہ گریٹر اسرائیل کا ان کا خواب تو دور کی بات موجودہ اسرائیل میں بھی انھیں جان کے لالے پڑے ہیں جس کا آئے دن صیہونی عہدہ دار اعتراف کرر ہے ہیں کہ ہم یہ جنگ ہار گئے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین