ہمیں امریکہ کے صدقہ کی ضرورت نہیں:ایران

ایران کے وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ ایران انسانی اور قدرتی وسائل سے مالا مال ہے اور ہمیں ٹرمپ کے صدقہ کی ضرورت نہیں۔

ولایت پورٹل:اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ایران پر تیل سے متعلق پابندیوں اور دیگر پابندیوں کو ختم کرنے کا مطالبہ  کرتے ہوئےاپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر لکھا ہے کہ ایران انسانی اور قدرتی وسائل سے مالا مال ہے اور ہمیں ٹرمپ کے صدقہ کی ضرورت نہیں ہے۔
انھوں نے مزید لکھا ہے کہ  وہ شخص کسی کی کیا مددکرے گا جو اپنے ملک کے لیے وینٹیلیٹر ان ممالک سے خریدتا ہے جن پر اس نے پابندیاں عائد کررکھی ہیں۔
ظریف نے مزید کہا کہ ہم ان سے جو کچھ کرنے کے لئے کہہ رہے ہیں وہ  یہ ہےکہ  تیل اور دیگر ایرانی مصنوعات کی فروخت پر عائد یکطرفہ پابندیاں ختم کرئے تا کہ ہم  اپنی ضروریات کی چیزیں خرید سکیں اور اپنی درآمد بڑھاسکیں ۔
واضح رہے کہ ایران کے اعلی سفارتی عہدہ داروں نے  اس قبل بھی ایران پر زیادہ سے زیادہ امریکی دباؤ کی پالیسی میں واشنگٹن کی ناکامی کا ذکر کرتے ہوئے کہا تھا کہ  کورونا کی عالمی بحرانی صورتحال میں غیر انسانی پابندیوں کو جاری رکھنے سے پابندیاں لگانے عادی امریکی حکومت کے مکروہ چہرے کو مزید نمایاں کر دیا ہے۔
ظریف نے دیگر ممالک سے بھی امریکی پابندیوں کی پرواہ  نہ کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ اب معاشی دہشت گردی سے طبی دہشت گردی کی طرف منتقل ہوچکا ہے۔


1
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین