Code : 3268 57 Hit

امریکی پابندیاں ایران کےلیے دوائیں اور طبی وسائل حاصل کرنے میں رکاوٹ ہیں:واشنگٹن پوسٹ

امریکی اخبار نے لکھا ہے کہ ایران کو امریکی پابندیوں کی وجہ سے دوائیں اور طبی وسائل حاصل کرنے میں مشکلات کا سامنا ہے۔

ولایت پورٹل:امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نےاپنی ایک رپورٹ میں  ارین کننگھم کا مضمون شائع کیا ہے جس میں لکھاہے کہ امریکی پابندیاں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے ایرانی حکومت کی دواؤں اور دیگر طبی سامان کو حاصل کرنے کی کوششوں میں رکاوٹ ہیں۔
اس رپورٹ کے مطابق  ایران کے بینکاری نظام پر پابندیوں اور تیل کی برآمدات کے بائیکاٹ کی وجہ سے تہران کی بیرون ملک سے ضروری سامان کی  خریداری کرنے کی صلاحیت محدود ہے  جس میں دوائیں اور اور اندرونی طور پر ضروری ادویات تیار کرنے کے لئے درکار سامان شامل ہیں۔
امریکی محکمہ خزانہ کے دفتر برائے غیر ملکی اثاثہ جات کنٹرول (اے ایف ای سی) کی سہ ماہی رپورٹ کے مطابق  ٹرمپ انتظامیہ نے متعدد کمپنیوں کو ایران کو دوائیں برآمد کرنے کے لئے جاری کردہ اجازت ناموں میں مزیدکمی کردی ہے۔
مذکورہ  رپورٹ کے مطابق ایرانی دوا ساز حکام اور عالمی ماہرین صحت کا کہنا ہے  کہ واضح ہے کہ ایرانی صحت کے نظام میں لوگوں کو بچانے اور وسیع پیمانے پر پھیلنے والے کورونا وائرس کو روکنے کے لئے ضروری سامان کے حصول پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔
واشنگٹن پوسٹ نے ایران میں ایک دوا ساز کمپنی کے ایک ملازم کے حوالے سے بتایا کہ پابندیوں نے دواؤں کی درآمد اور پیداوار کے عمل کو سست اور مہنگا کردیا ہے نیز کچھ سپلائرز امریکی پابندیوں سے ڈرتے ہیں اور اب وہ ہمارے ساتھ کام نہیں کرنا چاہتے ہیں جس کے نتیجہ میں پابندیوں نے اس وباء پر قابو پانے کے لئے ایران کی صلاحیت کم کردی ہے۔
واضح رہے کہ یہ رپورٹ ایسے وقت میں منظرعام پر آئی ہے جبکہ امریکی وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ ایران کے لیے دواؤں  کی برآمد پر کوئی پابندی نہیں ہے۔





0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम