Code : 2982 29 Hit

2020 کے امریکی انتخابات کے امیدواروں کی ٹرمپ کو بری کرنے کی مذمت

2020 کے امریکی صدارتی امیدواروں نے مواخذے کے معاملے میں ڈونلڈ ٹرمپ کو الزامات سے بری کرنے کے لئے سینیٹ کی کارروائی کی شدید مذمت کی ہے۔

ولایت پورٹل:امریکی کانگریس  کے ذرائع کی رپورٹ کے مطابق امریکی سینٹ میں ٹرمپ کو مواخذے کے دو بڑے الزامات سے بری کردیا گیا جبکہ  سینیٹ ڈیموکریٹس ٹرمپ کے خلاف قانونی چارہ جوئی کے لئے لازمی ووٹ حاصل کرنے میں ناکام رہے۔
رپورٹ کے مطابق ، 2020 کے امریکی صدارتی انتخابات کے  کچھ امیدواروں نے ٹویٹر پر پیغامات بھیج کر سینیٹ کے فیصلے پر سخت عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔
ڈیموکریٹک سینیٹر کلو باچر نے لکھاکہ یہ ہمارے ملک کے لئے ایک خوفناک دن تھا کیونکہ تاریخ یاد رکھے گی کہ ہماری سینٹ کے ارکان کی اکثریت شواہد کی تلاش میں نہیں تھی بلکہ اس کے بجائےانھوں نے فیصلہ کیا کہ صدر کے الزامات پر نظر ثانی کرنے کی بھی ضرورت نہیں ہے۔
انھوں نے مزید لکھا کہ امریکی عوام کے نمائندوں کی حیثیت سے ، ہمارا فرض ہے کہ ہم آئین کی پاسداری اور حفاظت کریں،ہمارےصدر نے ذاتی مفادات حاصل کرنے کے لئے اپنی طاقت کا استعمال کیا ہے، کوئی بھی قانون سے بالاتر نہیں ہے ۔
ایک اور ریپبلکن سینیٹر الزبتھ وارن نے یہ بھی لکھا کہ  ریپبلکن نے صدر کے تحفظ اور دفاع کے لئے ووٹ دیا ، حالانکہ انھوں نے اپنی ذاتی فائدے کے لئے اپنے عہدہ کا غلط استعمال کیا۔
انھوں نے لکھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے غیر ملکی حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ہمارے انتخابات میں مداخلت کرے۔
انھوں نے ہمارے سفارتی تعلقات کو نقصان پہنچایا ہے اور ہماری قومی سلامتی کو خطرے میں ڈال دیا ہے۔
نیو یارک کے سابق میئر مائیکل بلومبرگ نے بھی لکھاکہ ٹرمپ کے مقدمے کی سماعت سینیٹ میں کرانے کا عمل ایک معما تھا ، اور سینیٹ کا ووٹ امریکہ کے لیے عار تھی۔






 


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम