حزب اللہ کا مقابلہ کرنے کی امریکی صیہونی ناکام کوشش

اسرائیلی اور امریکی افواج کی مشترکہ فوجی مشقوں کے بارے میں میڈیا رپورٹس کے بعد، ایک عبرانی ذریعے نے انکشاف کیا کہ یہ مشق لبنانی حزب اللہ تحریک کی نقل ہے۔

ولایت پورٹل:عبرانی اخبار Haaretz  کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی افواج نے خطے میں امریکی سینٹرل کمانڈ(Centcom) کے ساتھ مشترکہ مشقیں کی ہیں تاکہ مشترکہ سیکورٹی چیلنجز خاص طور پر مقبوضہ علاقوں کے شمالی محاذ (لبنان کے ساتھ سرحد) سے نمٹنے کے لیے کام کیا جا سکے۔
ہاریٹز نے خبر دی کہ یہ مشق سینٹ کام کے سینئر افسران اور سینئر اسرائیلی فوجی حکام کے درمیان ہونے والی ملاقات کے دوران مشترکہ چیلنجوں کے ساتھ فوجی تصادم کے ممکنہ منظرناموں کا جائزہ لینے کے بعد حالیہ دنوں میں ہوئی، رپورٹ کے مطابق مشقوں میں فضائی دفاعی تعاون کے منصوبہ کوآرڈینیشن، معلومات کے تبادلے اور لاجسٹک معاونت جیسی مشقیں شامل ہیں۔
تاہم ہاریٹز کا کہنا ہے کہ اس مشق میں تل ابیب اور حزب اللہ کے درمیان ممکنہ تصادم میں امریکہ کی مؤثر شمولیت کے امکان کا ذکر نہیں کیا گیا،عبرانی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ تل ابیب اور حزب اللہ کے درمیان فوجی تصادم کی صورت میں، اس حقیقت کے باوجود کہ واشنگٹن اس تحریک کو ایک دہشت گرد گروپ سمجھتا ہے، امریکہ فوجی آپریشن میں موثر کردار ادا نہیں کرے گا اور اس میں شامل نہیں ہوگا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین