Code : 2630 39 Hit

ترکی کا غیر ملکی دہشت گردوں کو ان کے وطن واپس بھیجنے کا عمل شروع

ترکی کی وزارت داخلہ کے ذریعہ دہشت گرد گروہ کے ایک غیر ملکی رکن کو فرانس واپس کردیا گیاہے۔

ولایت پورٹل:اناطولیہ نیوزایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ترکی کی وزارت داخلہ نے پیر کوایک  فرانسیسی دہشت گرد کو ملک بدر کرنے اور واپس کرنے کا اعلان کیا ہے،اگرچہ ترک وزارت داخلہ کے بیان میں کسی دہشت گرد گروہ کا ذکر نہیں کیا گیا جس کا یہ  فرانسیسی دہشت گرد ممبر تھا لیکن کردستان 24 ویب سائٹ نے داعش سے منسلک غیر ملکی دہشت گردوں کو اپنے ملکوں میں واپس بھیجنے میں انقرہ حکومت کے حالیہ رویہ کا حوالہ دیتے ہوئے اس شخص کو بھی داعش کا ممبر قرار دیا ہے،ترکی کے وازارت نے اپنےبیان میں اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ وہ شام  حراست میں لیے گئے غیر ملکی دہشت گردوں کو ان کے وطن واپس بھیجتا رہے گا،یاد رہے کہ کرد ملیشیا سے لڑنے اور شامی مہاجرین کو ان کے ملک واپس بھیجنےکے بہانے ترک فوج کے شمالی شام پر حملے کے بعد رجب طیب اردگان کی حکومت نے مغربی ممالک  خصوصا یورپی ممالک کو دھمکی دی ہے کہ اگر وہ ترکی کے  اس فیصلے کی حمایت نہیں کریں گے تو  وہ داعش سے منسلک ہزاروں دہشتگرد عناصرکو ان کے اپنے ممالک میں واپس بھیج دے گا یہاں تک کہ اگر ان کی شہریت منسوخ بھی کردی گئی ہو،قابل ذکر ہے کہ یوروپی ممالک اکثر عراق اور شام میں دہشت گرد گروہوں میں شامل ہونے والے اپنے شہریوں  کی شہریت منسوخ کرکے انہیں اپنے ملک میں واپس آنے سے روکنے کی کوشش کرتے ہیں،یادرہے کہ ترک حکومت نے ہفتہ کے روز چار برطانوی دہشت گردوں کو بھی اپنے ملک واپس کردیاتھا،ترک حکومت کی طرف سے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق ، اس ملک نے اب تک 5007 غیرملکی دہشت گردوں کو اپنے ممالک واپس کردیا ہے اور اب بھی ترک جیلوں میں داعش سے وابستہ 1140 سے زیادہ غیر ملکی دہشت گرد موجود ہیں۔



0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम