Code : 2962 24 Hit

ٹرمپ کے داماد جمعرات کو صدی ڈیل کا منصوبہ سلامتی کونسل میں پیش کرنے والے ہیں

امریکی صدر کے مشیر اعلی کا جمعرات کو امریکہ کے مسلط کردہ سمجھوتے کےمنصوبے کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے خصوصی اجلاس میں پیش کرنے کا ارادہ ہے۔

ولایت پورٹل:فرانس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق واشنگٹن نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مسلط سمجھوتے کے منصوبے کو پیش کرنے کے لئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے غیرمعمولی اجلاس کا مطالبہ کیا ہے۔
سلامی کونسل کا یہ اجلاس جمعرات کے روز ہونے والا ہے جس میں امریکی صدر کے مشیر اعلی اور داماد جیریڈ کشنر  صدی ڈیل کے منصوبہ کو پیش کرنے والے ہیں۔
واضح رہے کہ یہ اجلاس فلسطینی اتھارٹی کے صدر محمود عباس کے11 فروری کو اقوام متحدہ کے دورے سے چند روز قبل ہوجائے گا۔
محمود عباس کا ارادہ ہے کہ وہ اقوام متحدہ میں جاکر اس امریکی منصوبے کے تئیں فلطینیوں کی مخالفت کا اعلان کریں گے اور فلسطین کے سلسلہ میں بین الاقوامی قراردادوں پر عمل درآمد کرنے کا مطالبہ کریں گے۔
اسلامی تعاون تنظیم نے بھی آج ، مغربی سعودی عرب میں جدہ  شہر میں واقع اپنے ہیڈ کوارٹر میں ، فلسطین کے لئے امریکی امن منصوبے پر بحث کرتے ہوئے اس کو مسترد کیا اور کہا کہ فلسطینیوں کےمسلم حقوق کو پائمال کرنے کے لئے کسی بھی قسم کی کوشش کو قبول نہیں کیا جائے گا۔
قابل ذکر ہے کہ یہ اجلاس ، جس میں سعودی اور متحدہ عرب امارات کے نمائندوں نے امریکی منصوبے کی مذمت کرنے سے انکار کیا ، عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کے اجلاس کے دو روز بعد منعقد ہوا ہے جس میں "صدی  ڈیل" کے نام سے امریکی امن منصوبے کو مسترد کردیا گیا تھا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین