Code : 2928 17 Hit

ٹرمپ نے سنچری ڈیل کے منصوبے میں اسرائیل کی بھر پور حمایت کی ہے:نیو یارک ٹائمز

ایک امریکی اخبار نے لکھا ہے کہ امریکی صدر نےایسے منصوبے کی نقاب کشائی کی ہے جو مکمل طور پر اسرائیل کے حق میں ہے۔

ولایت پورٹل:امریکی اخبار نیویارک ٹائمز نے ٹرمپ کے صدی کی ڈیل منصوبے کی نقاب کشائی پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے  لکھا ہے کہ ٹرمپ نے ایک ایسا منصوبہ پیش کیا ہے جس میں اسرائیل کی بھر پور پشت پناہی کی گئی ہے۔
رپورٹ میں آیا ہے کہ ٹرمپ نے مشرق وسطی کے امن منصوبے کو "جیت " سمجھوتہ قرار دیا ہے اور اسے فلسطینیوں کے لئے اچھا منصوبہ کہا ہے جبکہ اس  میں اسرائیل کی مکمل طور پر حمایت کی گئی ہے۔
مذکورہ اخبار نے صدی ڈیل کی رونمائی کا ذکر  کرتے ہوئے لکھا  ہے کہ اس ڈیل  کے منصوبے میں صہیونیوں کو زیادہ تر ان مسائل کی  پیش کش کی گئی ہےجو وہ کئی دہائیوں سے فلسطینیوں کے ساتھ تنازعہ میں ڈھونڈ رہے تھے جبکہ فلسطینیوں کے لیےمحدود خودمختاری والی حکومت کے امکان کا  صرف وعدہ کیا گیا ہے۔
رپورٹ کے مطابق ، ٹرمپ کا منصوبہ یہ یقینی بناتا ہے کہ اسرائیل یروشلم کو اپنے دارالحکومت کی حیثیت سے اپنے کنٹرول میں رکھے اور اسے مغربی کنارے میں صہیونی بستیوں کو ختم کرنے کی بھی ضرورت نہیں ہے۔
یادرہے کہ امریکی صدر نے صدی ڈیل کی نقاب کشائی جس میں صرف صیہونی موجود تھے اور کوئی فلسطینی وہاں نہیں تھا،کہا کہ میرا منصوبہ دونوں فریقوں کے لیے جیت لایا ہے،یہ  ایک حقیقت پسندانہ دو ریاستی حل ہے جو فلسطینی حکومت کے قیام کی صورت میں  اسرائیل کی  سلامتی کو لاحق خطرہ کو ختم کرتا ہے۔
قابل ذکر ہے کہ فلسطینی اتھارٹی کے صدر محمود عباس نے فوری طور پر اس منصوبے کو ناکام  سازش قراردیتے  ہوئے کہاکہ ہم ہزار بار کہیں گے؛ نہیں ، نہیں ، نہیں


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین