Code : 3527 14 Hit

ٹرمپ کا ٹویٹر کے خلاف اعلان جنگ

ٹویٹر کی انتخابی پالیسی کو نظرانداز کرتے ہوئے ریاستہائے متحدہ کے صدر نے ایک بیان شائع کیا جس میں اس سوشل میڈیا کے رد عمل کے علاوہ ان دونوں کے درمیان ایک خطرناک تنازعہ پیدا ہوگیا ہے۔

ولایت پورٹل:امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اپنے مقبول ٹویٹر اکاؤنٹ  پر2020کے انتخابی عمل میں مداخلت کا الزام عائد کرتے ہوئے اس کے ساتھ تنازعہ کھڑا کر دیا ہے۔
ٹرمپ کی طرف سے 2020 کے انتخابات کو پوسٹل بیلٹ کے ذریعہ منعقد کرنے کے کیلیفورنیا کے گورنر کے فیصلے پر تنقید کرنے کے بعد یہ تنازعہ اور بڑھ گیا ہے ، ووٹوں کی تردید کے پیغامات شائع کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ یہ اقدام  دھوکہ دہی سے مختلف نہیں ہے۔
ٹویٹر  نے بھی آدھی نیلی لائن میں تعجب کی علامت کے ساتھ اس سوشل میڈیا پر 80 ملین لوگ جو امریکہ کے صدر کی پیروی کرتے ہیں ان سے واضح طور پر کہا کہ وہ بغیر مطالعے کے ٹرمپ کی باتوں پر یقین نہ کریں۔
قابل ذکر ہے کہ ٹویٹر کی پالیسی کے مطابق ووٹنگ کے طریقوں سے متعلق غلط فہمیوں کو فروغ دینے والے پیغامات کو مٹا دیا جائے گا۔
 تاہم  اس بار اس  سوشل میڈیا نے محتاط رہنے اور ٹرمپ کے ٹویٹس کو حذف کرنے سے گریز کرنے کو ترجیح دی۔
واضح رہے کہ کرونا نے 2020 کے انتخابات کے نتائج پر قیاس آرائیاں کرنا مشکل بنا دیا ہے  لیکن معاشی نتائج نے ٹرمپ کی مہم کو کمزور کردیا ہے۔
تاہم ڈیموکریٹ رائے دہندگان کو توقع ہے کہ 2016 کی شکست کی بھرپائی کرنے کے لئے اس سال کے انتخابات میں ان کی مضبوط موجودگی ہوگی۔
دریں اثنا  غائبانہ بیلٹ کے ذریعہ ووٹ ڈالنے  سے ریپبلیکن ووٹرز کی تعداد میں مزید کمی آسکتی ہے جس کے نتیجہ میں ٹرمپ کے حریفوں کا پلڑا بھاری  ہوسکتا ہے۔
 
 

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین