متحدہ عرب امارات پر تنقید کرنے کے جرم میں سعودی اعلی فوجی افسر گرفتار

سعودی ذرائع نے متحدہ عرب امارات پر تنقید کرنے پر اس ملک کے ایک اعلیٰ افسر کی گرفتاری کی خبر دی ہے۔

ولایت پورٹل:معتقلی الرائے (نظریاتی قیدی) کے ٹوئٹر پیج نے اعلان کیا کہ سعودی حکام نے علی التواتی القرشی نامی ایک ریٹائرڈ افسر کو گرفتار کر لیا ہے،رپورٹ کے مطابق القرشی نے ٹویٹس میں متحدہ عرب امارات کی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا اور سعودی حکام نے انہیں گزشتہ ستمبر میں پوچھ گچھ کے لیے طلب کیا تھا۔
واضح رہے کہ ریٹائرڈ سعودی فوجی افسر نے ریٹائر ہونے کے بعد سیاسی اور اسٹریٹجک تجزیہ کار کے طور پر خدمات انجام دیں،انہوں نے ہمیشہ یمن میں متحدہ عرب امارات کے کردار پر تنقید کی ہے اور انصار اللہ کے خلاف جنگ میں سعودی اتحاد کی شکست کا ذمہ دار متحدہ عرب امارات کو ٹھہرایا ہےجبکہ یمن پر حملے کے آغاز میں متحدہ عرب امارات سعودی عرب کے اہم اتحادیوں میں سے ایک تھا، تاہم بعد میں اس نے سعودیوں سے علیحدگی اختیار کرتے ہوئےاپنی توجہ جنوبی یمنی وسائل اور اسٹریٹجک یمنی جزیرے پر مرکوز کر دی، جس میں سقطری جزیرہ  بھی شامل ہے۔
قابل ذکر ہے کہ  ابوظہبی نےیمنی جنوبی عبوری کونسل کی حمایت سے، جو یمن کی مرکزی حکومت سے خطے کی آزادی کا مطالبہ کرتی ہے، نےاس غریب ملک میں تقسیم کو ہوا دی ۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین