Code : 2335 54 Hit

آج ہندوستانی تاریخ کی مسلمانوں کی بدترین نسل کشی ہورہی ہے:امریکی جریدہ

امریکی جریدے دی اکانومسٹ نے لکھا ہے کہ نریندر مودی ہندوستان کی جمہوریت اور معیشت دونوں کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔

ولایت پورٹل:امریکی جریدے دی اکانومسٹ نے اپنی ایک رپورٹ میں لکھا  ہے کہ  کشمیر میں بڑے پیمانہ پر گرفتاریاں ، آسام میں ہزاروں مسلمانوں کی شہریت ختم کرنا،ہندوستانی  تاریخ میں مسلمانوں کی بدترین نسل کشی ہے،رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ نریندر مودی ہندوستان  کی جمہوریت اور معیشت دونوں کو نقصان پہنچا رہے ہیں،تفصیلات کے مطابق امریکی جریدے دی اکانومسٹ نے اپنی ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ ہندوستان  میں ٹیکس دینے والوں کی شرح بھی خطرناک حد تک کم ہوئی ہے اور یہاں کاروں، موٹرسائیکلوں کی خرید میں بھی 20 فیصد تک کمی ہوئی ہے جبکہ ستمبر کے آخر تک کاروبار میں سرمایہ کاری میں 88 فیصد تک کمی ہوئی،دی اکانومسٹ نے مودی حکومت کی پالیسیوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہندوستان میں کچھ بینک اور دیگر قرض دینے والے ادارے بحران کا شکار ہیں،معیشت نااہل اور برے طریقے سے چلائی جارہی ہے، ایسی صورتحال کے باوجود مغربی ممالک کا اکثر تجارتی طبقہ مودی کی حمایت کر رہا ہے جو لمحہ فکریہ ہے،ہندوستانی وزیراعظم نریندر مودی جمہوریت اور معیشت دونوں کو نقصان پہنچا رہے ہیں،ہندوستان  میں اس وقت نہ صرف جمہوریت بلکہ معیشت بھی بد سے بدتر ہو رہی ہے ،یاد رہے چند روز قبل ہندوستان کے سابق وزیراعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ نے کہا   ہے کہ نریندر مودی حکومت کی متعصب پالیسیوں اور نااہلی کی وجہ سے ملک معاشی بحران میں پھنس گیا ہے اور اس کا مستقبل تاریک نظر آتا ہے،انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کی ناقص اقتصادی پالیسیوں کی وجہ سےمعاشی مندی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اوراس کا اثرعام لوگوں، کسانوں اور مزدوروں پر پڑا ہے،انہوں نے انکشاف کیا کہ کسانوں کی خودکشی میں مہاراشٹر اوّل نمبر پر ہے ۔
تسنیم


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम