Code : 4656 9 Hit

صیہونیوں کو گلے لگانے والوں کا مسجد الاقصی میں آنا صیہونی آبادکاروں کے حملوں سے کم نہیں:خطیب مسجد الاقصی

مسجد اقصیٰ کے خطیب اور مقبوضہ بیت المقدس کی سپریم اسلامی کونسل کے سربراہ نے اس بات پر زور دیا کہ صیہونیوں کے ساتھ سمجھوتہ کرنے والے مسجد اقصیٰ کا دورہ کرنے والوں کا خطرہ اس مسجد پر صہیونیوں کے حملے سے کم نہیں ہے۔

ولایت پورٹل:العہد نیوز ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق مسجد اقصیٰ کے خطیب اور مقبوضہ بیت المقدس کی سپریم اسلامی کونسل کے سربراہ  شیخ عکرمہ صابری نے زور دے کر کہا کہ صہیونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے والوں کامقبوضہ شہر یروشلم کا دورہ کرنا تعلقات معمول پر لانے کے جرم کا واضح نتیجہ ہے، صبری نے کہا کہ کوئی بھی وفد جو صہیونی حکومت کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کی وجہ سے مقبوضہ بیت المقدس میں داخل ہوتا ہے ، اس کا نقصان مسجد اقصیٰ پر آباد کاروں کے حملے سے کم نہیں ہے، انہوں نے کہا کہ صہیونی حکومت کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے والوں کا مسجد اقصیٰ کا دورہ مکمل طور پر مسترد کیا جاتا ہے اور تمام حکومتوں کو یہودی ورژن کے بجائے مسجد اقصیٰ کے اسلامی ورژن کی طرف لوٹنا چاہئے۔
شیخ صبری نے مزید کہا کہ صہیونی حکومت کے زیراہتمام مسجد اقصیٰ میں ان وفود کی آمد مقبوضہ شہر قدس پر قابض حکومت کو جواز بخشنے کا صریح اعتراف ہے۔
صبری نے یہ بھی کہا کہ ان وفود کی آمد سے قدس شہر کی حقیقت میں کوئی تبدیلی نہیں آسکتی ہے اور وہ قابض حکومت کو قدس اور مسجد اقصی پر قبضہ کرنے کا کبھی بھی کوئی جواز فراہم نہیں کرسکتے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین