Code : 4103 6 Hit

یہاں سے چلے جاؤ،یہ پروپگنڈے کی جگہ نہیں ہے؛لبنانی شہری کا سعودی نامہ نگار سے خطاب

لبنانی مظاہرین نے سعودی عرب کے العربیہ چینل کے نقطہ نظر کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اسے سازشی قرار دیا اور اس چینل کے سے مظاہرے کی جگہ سے کا مطالبہ کیا۔

ولایت پورٹل:بیروت  دھماکے کے بارے میں سعودی میڈیا خصوصا العربیہ چینل اورکچھ لبنانی مقامی میڈیا کے موقف نے حال ہی میں لبنانی شہریوں کے احتجاج کو مشتعل کیا ہے،اسی وجہ سے آج اتوار کی سہ پہر ٹویٹر پر شائع کی گئی ایک ویڈیو میں  لبنانی شہری نے میڈیا کے اس طرز عمل پر تنقید کی اور سعودی عرب کے چینل العربیہ کے ایک رپورٹر سے وسطی بیروت  میں واقع الشہدا چوک  سے چلے جانےکو کہا، ویڈیو میں دکھایا گیا ہے کہ ایک لبنانی بالغ شہری نے مذکورہ چینل کے رپورٹر سے کہا کہ آپ اپنے اپنے چینل کے ذریعہ لبنان میں سازش اور بغاوت کی تلاش کر رہے ہیں، آپ ایک سازشی چینل کے نامہ نگار ہیں۔
اس لبنانی شہری نے یہ کہتے ہوئے کہ لبنان اور مظاہروں میں بغاوت اور سازشیوں کے لئے کوئی جگہ نہیں  ہے، العربیہ کے ایک رپورٹر سے الشہدا چوک چھوڑنے کو کہا جو مظاہرین کے لئے ایک اجتماعی مقام ہے۔
واضح رہے کہ لبنان میں کل سہ پہر سے بیروت بندرگاہ کے دھماکے کے خلاف بیروت کے کچھ چوکوں ، بشمول شہداء کے سینٹرل اسکوائر میں مظاہرے ہورہے ہیں، لبنانی مظاہرین بیروت دھماکے کے قصورواروں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کا مطالبہ کررہے ہیں، تاہم مظاہرین کے ذریعہ وزارتوں اوردیگر متعدد  محکموں پر حملوں کے نتیجے میں مظاہرے تشدد میں بدل چکے ہیں،جہاں سے معلوم ہوتا ہے کہ مظاہروں کی آڑ میں کچھ لوگ ملک میں عدم استحکام اور آشوب برپا کرنے کے درپے ہیں  تاکہ وہ اپنے ناپاک عزائم تک پہنچ سکیں،اس سے پہلے انھوں نےاس سانحہ میں  حزب اللہ کے الزامات کی بوچھار کی تھی لیکن وہ اپنے مقاصد میں کامیاب نہیں ہوسکے اور اب مظاہروں کا سہارہ لے رہے ہیں۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین