یوکرین سے اسمگل شدہ اسلحہ کا سیلاب آسکتا ہے؛ انٹرپول کا انتباہ

انٹرپول کے سکریٹری جنرل نے یوکرین میں جنگ کے خاتمے کے بعد اس ملک سے اسمگل شدہ ہتھیاروں کے سیلاب کے بارے میں خبردار کیا۔

ولایت پورٹل:بین الاقوامی پولیس اسسٹنس فورس (انٹرپول) کے سکریٹری جنرل یورگن اسٹوک نے جنگ کے نتیجے میں یوکرین سے اسلحے کی اسمگلنگ کے سیلاب سے خبردار کرتے ہوئے واشنگٹن پوسٹ کو بتایا کہ  ہم نے پہلے بلقان میں ایسا ہوتا دیکھا ہے، اس کے علاوہ افریقہ میں بھی ہم نے دیکھا ہے کہ منظم جرائم کے گروہ عدم استحکام ، ہتھیاروں اور یہاں تک کہ فوجی ہتھیاروں کی دستیابی سے فائدہ اٹھانے کی کوشش کرچکے ہیں۔
انہوں نے یہ بتاتے ہوئے کہ ہلکے ہتھیار ان کی سب سے بڑی تشویش ہے، انٹرپول کے رکن ممالک سے مطالبہ کیا کہ وہ ہتھیاروں کا سراغ لگانے میں مدد کرنے کے لیے ان کے پاس موجود معلومات کو استعمال کریں، درایں اثنا یوروپول کی چیف ایگزیکٹیو کیتھرین ڈی بولا نے ایک انٹرویو میں کہا کہ یہ تنظیم مغرب کی طرف سے یوکرین کو عطیہ کیے گئے ہتھیاروں کے سیلاب کا انتظار کر رہی ہے، جنہیں یورپ اسمگل کیا جائے گا۔
یورپی عہدیدار نے ایسی صورت حال سے نمٹنے کے لیے کیا اقدامات کیے گئے ہیں اس کی وضاحت کیے بغیر کہا کہ ایک بین الاقوامی ورکنگ گروپ اس ممکنہ مسئلے سے نمٹنے کے لیے مختلف آپشنز کی تلاش میں ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین