Code : 2445 100 Hit

اسرائیل کے ساتھ غیر مشروط صلح کا وقت آچکا ہے:سعودی قلمکار

ایک سعودی قلمکار نے صیہونی حکومت کے ساتھ غیر مشروط مفاہمت کا مطالبہ کرتے ہوئے آزادی فلسطین کے جملے کو عربی لغت سے خارج کرنے کی مالگ کی ہے۔

ولایت پورٹل:مشہور سعودی قلمکار عبدالحمید الغبین نے ایک بار پھر اپنے ٹویٹر پیج پر صیہونی حکومت کے ساتھ دوستی کے فروغ کے سلسلہ میں پوسٹ کی جس کے بعدصیہونی وزارت خارجہ کی طرف سے اس کا زبردست خیرمقدم کیا گیا،الغبین ، اس سے پہلے بھی کئی بار فلسطین کی مخالفت اور صیہونیوں کے ساتھ کے سلسلہ میں اظہار خیال کرچکے ہیں لیکن اس بار انھوں نے اپنے ٹویٹر پیج پر دعوی کیا ہے کہ بغیر کسی شرط کے  اسرائیل کے ساتھ صلح کا وقت آچکا ہے  اور صیہونی حکومت سے ساتھ ستر سال سے  لڑتے ہوئے عرب حکومتوں کو تباہی وبربادی کے علاوہ کچھ بھی نصیب نہیں ہوا ،انھوں نے مزید کہا کہ اب وہ دور آگیا ہے کہ ہم فلسطین کی آزادی جیسے الفاظ اپنیڈکشنری سے مٹا دیں ،اب وقت آگیا ہے کہ اسرائیلی باشندے خطہ کا جز سمجھیں جائیں  اور تمام عرب عوام  کے دلوں میں باز آبادیاتی اور امید کی کرن جاگ اٹھے،اس ٹویٹ کے فورا بعد ، جو عرب زبان حلقہ میں  غم و غصے کی لہر دوڑ گئی لیکن صیہونی حکومت کے وزارت خارجہ کے عربی صفحے نے اس پوسٹ کا  پرتپاک خیرمقدم کرتے ہوئے  دعوی کیا ہے کہ وہ سچ بولنے کے لیے بھی ہمت چاہیے،الغبین لندن میں قائم  پولیٹیکل اسٹڈیز ریسرچ سینٹر کے سربراہ ہیں اور خود کو سعودی عرب کی پہلی 50 بااثر شخصیات میں شمار کرتے ہیں ،اسے ایک ایسے شخص کے طور پر جانا جاتا ہے جو صہیونی حکومت کے ساتھ تعلقات کو معمول پر لانے کے لئے بنیادی طور پر کام کر رہا ہے، اس نے اس سے پہلے بھی کہا تھا کہ اسرائیل اور لبنان کے درمیان ممکنہ جنگ میں اسرائیل کا ساتھ دوں گا،حال ہی میں اس سے صیہونی فوج سے اپیل کی ہے کہ وہ حزب اللہ جلد از جلد ختم کر دے۔

0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम