Code : 3487 24 Hit

اسرائیل کے لیے ایران کا خطرہ دن بدن بڑھتا جارہا ہے:امریکی اعلی عہدہ دار

امریکی ذرائع کا دعویٰ ہے کہ امریکی وزیر خارجہ کے مقبوضہ فلسطین کا دورہ کرنے کا اصلی مقصد مغربی کنارے کے کچھ حصوں کےالحاق کے بارے میں گفتگو نہیں کرنا تھا بلکہ اسرائیل کے خلاف ایران کے بڑھتے ہوئے خطرات پر تبادلۂ خیال کرنا تھا۔

ولایت پورٹل:صیہونی سرکاری ٹیلی ویژن کے ممتاز سیاسی تجزیہ کار براک روید نے اپنے ٹویٹر پیج پر امریکی اعلی عہدہ دار کے حوالے سے لکھا کہ ہمیں اس خیال سے جان چھڑانے کی ضرورت ہے کہ مغربی کنارے کی شمولیت کے بارے میں بات کرنے کے لئے ہم نے آدھی دنیا کا سفر کیا ہے، صیہونی  حکومت میں بہت ساری مشکلات ہیں،میرے خیال میں اس مسئلے کے سلسلہ میں کسی نتیجے پر آنے میں وقت لگے گا ۔
واضح رہے کہ امریکی عہدہ دار نے اپنا نام ظاہر نہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکی  وزیر خارجہ مائک پمپؤ کے اسرائیل دورے کے دوران مغربی پٹی کے مقبوضہ علاقوں میں شامل کرنے کے لیے گفتگو کرنا ان کی ترجیحات میں شامل نہیں تھا اس لیے کہ ہمارے پاس اس سے بڑے موضوع گفتگو کرنے کے لیے موجود تھے جن میں سے ایک ایران کے خطرات ہیں،یہ خطرات حقیقت میں بہت شدید ہیں اور ان میں دن بدن اضافہ ہوتا چلا آرہا ہے، ایرانی جوہری میدان میں ترقی کررہے ہیں۔
امریکی عہدے دار نے مزید کہا کہ چین کے ساتھ اسرائیل کےتعاون  کوخطرناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ پومپیو نے اسرائیلیوں سے چین کے بارے میں بات کی۔
واضح رہے کہ امریکی وزیر خارجہ پومپیو کے ان بے بنیاد دعووں کہ بیجنگ دنیا میں کویئڈ 19 وائرس کے پھیلنے میں ملوث تھا ،کی وجہ سے حالیہ ہفتوں میں امریکہ اور چین کے تعلقات کشیدہ ہوگئے ہیں
قابل ذکر ہے کہ امریکہ نے  اس بحران سے فائدہ اٹھا کر دوسرے ممالک پر دباؤ ڈالا ہے۔



0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین