محاصر ختم ہو گا تبھی جنگ بندی کامیاب ہوگی:عبدالسلام

یمن کی قومی سالویشن حکومت کی مذاکراتی ٹیم کے سربراہ نے جنگ بندی میں توسیع کا ذکر کرتے ہوئے صنعا کے ہوائی اڈے کو دوبارہ کھولنے اور یمن کی ناکہ بندی ختم کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

ولایت پورٹل:یمن کی نیشنل سالویشن گورنمنٹ کی مذاکراتی ٹیم کے سربراہ محمد عبدالسلام نے کہا کہ عمان  کے ہمارے بھائیوں کی کوششوں کے نتیجے میں جنگ بندی میں توسیع کا موقع فراہم ہوا،انہوں نے ملازمین کی تنخواہوں کی ادائیگی،صنعا ہوائی اڈے اور بندرگاہ کو دوبارہ کھولنے نیز یمن کی ناکہ بندی ختم کرنے کے لیے اقوام متحدہ کے اقدام کی اہمیت پر زور دیا۔
المسیرہ ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق عبدالسلام نے کہا کہ انسانی مسائل یمنی عوام کے فطری حقوق ہیں اور مزید سنجیدہ اور مستحکم مراحل میں داخل ہونے کے لیے ان سے فوری طور پر نمٹنا ضروری ہے۔
واضح رہے کہ یمن کے امور کے لیے اقوام متحدہ کے ایلچیHans Grundberg  نے منگل کی شام یمن میں جنگ بندی میں توسیع کا اعلان کیا،الجزیرہ نیوز چینل نے اقوام متحدہ کے ایلچی کا حوالہ دیتے ہوئے اطلاع دی ہے کہ جارح سعودی اماراتی اتحاد اور یمن کی قومی سالویشن حکومت نے یمن میں جنگ بندی میں مزید دو ماہ کی توسیع پر اتفاق کیا ہے،یمن میں دو ماہ کی جنگ بندی اس سال اپریل شروع ہوئی تھی، لیکن یہ 12 جون کو یمن کے لیے اقوام متحدہ کے ایلچی نے اعلان کیا کہ یمن میں شامل فریقین نے انہیں شرائط پر اتفاق کیا ہے جو اصل معاہدے میں شامل ہیں اور جنگ بندی کو مزید دو ماہ تک بڑھایا جائے گا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین