Code : 2494 28 Hit

ہماری شرطیں مانو گے تو جنگ بندی ہوگی:صنعا کا جارح ممالک سے خطاب

یمنی اعلی سیاسی کونسل کے سربراہ کا کہنا ہے کہ صنعا نے جارحین کے لیے ثابت کر دیا ہے کہ جب تک ہماری شرطیں منظور نہیں ہوں گی جنگ بندی نہیں ہوسکتی،کونسل کے سربراہ نے صنعا کے سلسلہ میں مذاکرات کے لیے اپنی آمادگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مذاکرات ایسے ہونے چاہیے جن کے بعد یمن کے خلاف مکمل جنگ بندی کا اعلان کیا جاسکے۔

ولایت پورٹل:المسیرہ نیوز ایجنسی نے اپنی ویب سائٹ پو لکھا ہے کہ  مہدی مشاط نے جمعہ کی رات کو اعلان کیا  کہ ہم نے یمن بلکہ پورے خطہ میں ثابت کردیا ہے کہ یمنی ایک متحد قوم ہیں جب تک ہماری شرطیں پوری نہیں کی جائیں گے امن کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا،رپورٹ کے مطابق انھوں نے مزید کہا کہ ہماری پہلی شرط یہ ہے کہ پچھلی تمام غلطیوں کا جائزہ لیا جائے  اور خطہ میں یمن کا احترام  باقی رکھنے کا عزم کیا جائے  اگر ایسا ہوگا تو خطہ میں امن برقرار ہوسکے گا،المشاط نے مزید کہا کہ  اگر یمن کے خلاف جنگ جاری رہی تو خطہ کو ایسے خطرات لاحق ہوں گے جنہیں برداشت کرنا مشکل ہوجائے گا،سیاسی کونسل کے چیئرمین نے صنعا کے امن کے عزم پر زور دیتے ہوئے کہا  کہ ہم جنگ بندی میں حالیہ کامیابیوں کا خیرمقدم کرتے ہیں اس لیے کہ اس سے  ہمارے بہادر اسیروں کی رہائی ہوئی،المشاط نے کہا کہ ہم ایسے سنجیدہ مذاکرات کا بھی خیرمقدم کرتے ہیں جن سے جنگ ، تباہی اور محاصرے کا خاتمہ ہوتا ہے اور ہماری سرزمین پر اجنبی فوجیوں کی موجودگی کا  بھی خاتمہ ہوتا ہے ،ادھر عمان کے وزیر خارجہ وصف بن علوی نے پیر کے روز کہا کہ صنعا کی طرح سعودی عرب بھی یمن میں تنازعہ کے خاتمے کے لئے بات چیت کرنے  میں سنجیدہ ہے،اناطولیہ نیوز ایجنسی نے حال ہی میں ایک سیاسی ذریعے کے حوالے سے بتایا ہے کہ عمان سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان اور محمد عبد السلام کی سربراہی میں انصاراللہ کے وفد کے درمیان  ملاقات کی تیاری کر رہا ہے۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम