دشمن یمنی عوام کے اندر فتنہ اور تفرقہ ڈالنے کی کوشش کر رہا ہے: انصار اللہ

یمنی انصار اللہ کے سربراہ نے اعلان کیا کہ دشمن مختلف عنوانات سے یمنی عوام میں فتنہ اور تفرقہ اندازی کی کوشش کر رہا ہے۔

ولایت پورٹل:المسیرہ  چینل کی رپورٹ کے مطابق یمنی انصار اللہ تحریک کے رہنما سید عبدالمالک بدرالدین الحوثی نے صوبہ البیضا میں قبائل کے ایک وفد سے ملاقات کے دوران کہا کہ دشمن ہمارے ملک پر تسلط قائم کرنے کے لیے مختلف عنوانات  سےیمنی عوام کے اندر فتنہ اور تفرقہ ڈالنے کی کوشش کر رہا ہے ۔
الحوثی کے مطابق البیضاء صوبے پر سعودی اتحاد کی طرف سے بمباری کی جا رہی ہے جس کی وجہ سے اس صوبے کے عوام کو شدید نقصان پہنچا ہے، تاہم ان کے مؤقف نےاس  خطے کو  سعودی اتحاد سے آزاد کرانے میں مدد کی جس سے وہاں تعاون، سماجی امن، سلامتی اور استحکام کو مضبوط کرنے کا موقع ملا۔
یمنی انصار اللہ کے رہنما نے مزید کہاکہ یمن کے عوام کے ساتھ ہونے والی ملاقاتیں یمنی عوام کے بھائی چارے، تعاون اور معاہدے کی حقیقی تصویر کو ظاہر کرتی ہیں، انصار اللہ کے رہنما نے مغربی یمن میں سعودی اتحاد کے جرائم کے بارے میں کہا کہ ان جرائم سے اس کے وحشیانہ پن کا پتہ چلتا ہے، خاص طور پر جب ایک  بچے کو اس کی ماں کے پیٹ سے نکال دیا گیا اور ایک غریب خاندان پر بمباری کی گئی۔
 اس کے علاوہ پیر کے روز یمنی سپریم پولیٹیکل کونسل کے چیئرمین مہدی المشاط نے یمنی شہریوں کو اس ملک سے برطانوی فوجیوں کے انخلاء کی 54ویں سالگرہ  کے موقع پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے  آباؤ اجداد کی جدوجہد نے  آج ہمیں عزت عطاکی ہے جو اپنی قوم اور وطن کے شانہ بشانہ کھڑے رہے اور شرم  ہونی چاہیے ان لوگوں کے لیے جنہوں نے اپنی قوم اور وطن سے غداری کی۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین