امریکی بالا دستی کا خاتمہ:المیادین

المیادین چینل کی ویب سائٹ نے اپنے ایک کالم میں لکھا ہے کہ امریکہ مشرقی یورپ اور مشرقی ایشیا میں ہار جائے گا اور اس سے یک قطبی دنیا ہر چیز سے زیادہ بدل جائے گی۔

ولایت پورٹل:المیادین چینل کی ویب سائٹ نے شارل ابی نادر کے لکھے گئے ایک کالم میں بین الاقوامی تعلقات کی صورتحال اور یوکرین کے بحران نیز تائیوان میں کشیدگی کا جائزہ لیتے ہوئے لکھا کہ امریکہ کا اثر و رسوخ شدید کمزور ہو گیا ہے جس کا اثر یک قطبی دنیا بہت زیادہ دیکھنے کو مل رہا اور اس کو نقصان پہنچا ہے۔
 ابی نادر نے سوال اٹھایا کہ یوکرین میں شکست اور جنگ کے خاتمے  نیز روس کی جیت کے بعد امریکہ کی پوزیشن کہاں پہنچ جائے گی، اس سوال کا جواب انہوں نے خود انہوں نے لکھا کہ صرف یوکرین میں ناکامی اس پوری بنیاد کو ہلا دینے کے لیے کافی ہوگی جس پر نارتھ اٹلانٹک ٹریٹی آرگنائزیشن (نیٹو) کھڑی ہے۔
انہوں نے  Zaporozhye نیوکلیئر پاور پلانٹ پر یوکرین کے میزائل اور راکٹ حملوں کا حوالہ دیتے ہوئے مزید کہا کہ کیا کوئی مبصر اور تجزیہ کار یہ تصور کر سکتا ہے کہ یوکرین کے صدر Volodymyr Zelensky نے نیٹو کی براہ راست منظوری کے بغیر اپنے یونٹوں کو ایٹمی پاور پلانٹ پر بمباری کرنے کا حکم دیا ہے۔
انہوں نے مزید لکھا ہے کہ واشنگٹن کی قیادت میں نیٹو نے یہ بڑا خطرہ مول لیا ہے، جو  Zaporozhye جوہری پاور پلانٹ پر حملہ کیاہے، جس سے یورپ اور دنیا کو تباہ کن خطرات لاحق ہوسکتے ہیں،اس کے بعد کہا جاسکتا ہے کہ نیٹو اس نے اپنی سوچ اور اعصاب کی طاقت کھو دی ہے اور وہ یوکرین میں روسی کارروائیوں کے تسلسل کو روکنے کے لیے کچھ بھی کرنے کو تیار ہے چاہے اس کی قیمت رکن ممالک کی سلامتی کو کھونا ہی کیوں نہ ہو۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین