صیہونیوں کے ساتھ کسی بھی طرح کی شراکت داری نہیں ہوگی:لبنانی صدر

لبنانی صدر نے صیہونی حکومت کے ساتھ سمندری سرحدیں کھینچنے کے معاملے میں اپنے ملک کے سمندری حقوق کی ضمانت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ہم گیس کے میدانوں میں اسرائیل کے ساتھ کبھی بھی شراکت داری نہیں کریں گے۔

ولایت پورٹل:لبنان کے صدر میشل عون نے کہا کہ امریکی ثالث آموس ہوچسٹین کی تجویز کے مواد پر بیروت کے موقف کا تعین وزیر اعظم اور ایوان نمائندگان کے اسپیکر کی مشاورت اور تکنیکی کمیٹی کے مشورے سے کیا جائے گا، عون نے فرانس کی وزارت برائے یورپ اور خارجہ امور میں افریقہ اور مغربی ایشیا کی ڈائریکٹر آنا گوگین کے ساتھ ملاقات میں کہا کہ گزشتہ مہینوں کے دوران لبنان کے پانیوں میں حقوق کے تحفظ اور اس کے لیے مناسب حالات فراہم کرنے کی کوششیں کی گئی ہیں۔
انہوں نے کہا کہ فرانس کی ٹوٹل کمپنی کی موجودگی کے ساتھ اقتصادی زون میں واقع تیل اور گیس کے شعبوں میں تلاشی کے کاموں کا آغاز کرنے کے لیے ضمانت دی جانی چاہیے، عون نے زور دے کر کہا کہ اسرائیلی فریق کے ساتھ گیس فیلڈز میں کوئی شراکت نہیں ہوگی۔
 رائے الیوم اخبار کے مطابق لبنان کے صدر نے اس امید کا اظہار بھی کیا کہ جنوبی شعبوں میں تیل کی تلاش کے کاموں کا آغاز لبنان کی اقتصادی خوشحالی کی سمت میں ایک مثبت اور نتیجہ خیز آغاز ہو گا۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین