Code : 2830 27 Hit

چور کی داڑھی میں تنکا؛صیہونیوں کی جنرل سلیمانی کے قتل میں ملوث ہونے کی باربار تردید

صہیونی فوج کے ترجمان نے متعدد بار کوشش کی ہے کہ لیفٹیننٹ جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کرنے کے لئے صیہونی جاسوس ایجنسیوں کا امریکہ کے ساتھ کسی بھی طرح کے تعاون کی تردید کرنے کی کوشش کی ہے۔

 
ولایت پورٹل:فرانس24نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی فوج کے ترجمان نے منگل کی شب ایک بار پھر دعوی کیا ہے کہ لیفٹیننٹ جنرل قاسم سلیمانی کے قتل میں صیہونیوں کا کوئی کردار نہیں ہے،رپورٹ کے مطابق اسرائیلی فوج کے ترجمان جوناتھن کورنکاس نے ان خبروں کی تردید کرتے ہوئے  کہ لیفٹیننٹ جنرل سلیمانی کے قتل میں اسرائیلی انٹلیجنس نے مدد کی تھی، کہا کہ یہ صرف امریکہ کی کاروائی تھی،ہمارا اس میں کوئی ہاتھ نہیں تھا،تاہم مذکورہ صیہونی عہدیدار نے امریکہ کے ہاتھوں  میجر جنرل سلیمانی کے قتل کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ اس کاروائی کے بعد  مشرق وسطی ممکنہ طور پر زیادہ مستحکم اور محفوظ ہوسکتا ہے،واضح رہے کہ ادھر  کچھ میڈیا اور صہیونی تجزیہ کاروں نے گذشتہ دنوں یہ اطلاع دی تھی کہ امریکہ اور تل ابیب نے مل کرجنرل قاسم سلیمانی کے قتل کا منصوبے بنایا تھا،باخبر اسرائیلی تجزیہ کاروں نے سکیورٹی اور سنسرشپ کی وجہ سے اسرائیلی نیوز چینل 13 کے ساتھ انٹرویو میں مزید کوئی تفصیلات بتانے سے انکار کردیا ، تاہم تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ لیفٹیننٹ سلیمانی کے قتل کی کوشش سے کچھ دن پہلے امریکہ نے  اس کارروائی کے متعلق تل ابیب کو بتا دیاتھا،صیہونی سکیورٹی ایجنسیوں  کے قریبی اسرائیلی صحافی بارک راویڈ کا کہنا ہے کہ امریکہ نے کچھ دن پہلے ہی عراق میں اپنی حالیہ کاروائیوں کے بارے میں اسرائیل کو آگاہ کیا تھا۔


 

0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम