Code : 2589 58 Hit

صیہونی پارلیمنٹ منحل

صیہونی پارلیمنٹ کو آج صبح باضابطہ طور پر تحلیل کر دیا گیا ہے تاکہ مقبوضہ فلسطین میں اگلے سال مارچ میں انتخابات ہوسکیں۔

ولایت پورٹل:صیہونی پارلیمنٹ نے آج صبح باضابطہ طور پر اپنی تحلیل کا اعلان کردیا ہے تاکہ  مقبوضہ فلسطین میں ایک سال کے دوران تیسری بار انتخابات ہوسکیں،یادرہے کہ صیہونی ممبران پارلیمنٹ نے کابینہ تشکیل دینے کی مدت  ختم ہونے  سے چند گھنٹے قبل بدھ کے روز پارلیمنٹ اسپیکر کے سامنے تحلیل کا منصوبہ پیش کیا تھا،اس منصوبے میں کہا گیا تھا کہ غیر معمولی حالات کی وجہ سے اور مسلسل دو انتخابات کے کابینہ تشکیل دینے میں ناکام رہنے کے بعد پارلمنٹ کو تحلیل کرنےکی تجویز پیش کی جارہی ہے،قابل ذکر ہے کہ لیکود پارٹی کے رہنما بنیامین نیتن یاہو اور بلیک وائٹ پارٹی کے رہنما بینی گینٹز دونوں چار ہفتوں کی مدت میں کابینہ تشکیل دینے میں ناکام رہے ، جس کے بعد صیہونی حکومت کے رہنما نے 120 رکن پارلیمنٹ کو بائیس دن کے اندر کسی ایسے شخص کو ڈھونڈنے کا پابند کیا جو زیادہ سے زیادہ اتحادی کابینہ تشکیل دے سکےلیکن یہ موقع بدھ کے روز ختم ہو گئی مگر کابینہ تشکیل نہیں پاسکی،واضح رہے کہ مقبوضہ فلسطین  میں ایک سال کے اندرتیسری مرتبہ انتخابات کا آغاز ہورہاہے جبکہ یہ واضح نہیں ہے کہ یہ انتخابات بھی کابینہ کے قیام کا باعث بن سکتے ہیں یا نہیں،دوسری طرف ، قدس قابض حکومت کے موجودہ وزیر اعظم نیتن یاھو کو بھی رشوت سے متعلق باقاعدہ الزامات کا سامنا ہے اور ان کا سیاسی مستقبل غیر یقینی ہے، انھیں گیوڈون سعر سمیت کچھ لیکود پارٹی کی شخصیات نے چیلنج کیا ہے،اس سے قبل 2 مارچ 2020کو مقبوضہ فلسطین میں اگلے انتخابات ہونا طے پائے تھے،رائٹرز نیوز ایجنسی نے حال ہی میں اطلاع دی تھی  کہ مارچ میں عام انتخابات سے قبل ، لیکود پارٹی کو اپنا اگلا صدر نامزد کرنے کے لئے پارٹی میں ضمنی انتخابات کا بھی سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम