Code : 3292 37 Hit

امریکہ عراق میں ایران مخالف حکومت کا خواہاں ہے:عراقی میڈیا

عراقی میڈیا کا کہنا ہے کہ سترہ سال سے امریکہ نے عراق کے لئے کوئی اچھا کام نہیں کیا ہے اور اسے تباہ کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔

ولایت پورٹل:العہد چینل کی ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق عراقی سیاسی تجزیہ کار ولید التائی نے عراق کے داخلی معاملات میں امریکی مداخلت  کے بارے میں بات کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ امریکہ سے عراق کو کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔
انھوں نے کہا کہ امریکہ کا تمام ہم وغم یہ ہے کہ عراق میں ایران کے خلاف حکومت قائم ہوجائےجو سعودی عرب ، بحرین اور متحدہ عرب امارات کی طرح  کھل کر ایران کی مخالفت کرے۔
التائی نے مزید کہا کہ امریکہ عراق میں آزاد حکومت کا قیام نہیں چاہتا بلکہ وہ اس ملک کے سیاسی ، معاشی ، معاشرتی ، سلامتی ، فوجی یہاں تک کہ مذہبی فیصلہ سازی میں  بھی اہم کردار ادا کرنا چاہتا ہے، امریکہ مذہب کا بھی اپنے  انداز اور پیمانے  مطالبہ کرتا ہے۔
عراقی تجزیہ کار نےکہا کہ یہی وجہ ہے کہ امریکہ  الحشدد الشعبی اور اس کے کمانڈروں کا دشمن ہے  کیونکہ وہ عراق کی مقدس سرزمین میں امریکہ کی موجودگی کے خلاف ہیں۔
انھوں نے مزید کہا کہ الحشد الشعبی کے کمانڈر اور مزاحمتی قوتیں عراقی قومی تنظیمیں بن چکی ہیں جن پر عراقی عوام بھروسہ اور اعتمادکرسکتے ہیں۔
التائی نے اس بات پر زور دیتے ہوئے  کہ کچھ عراقی سیاسی دھڑے امریکہ کے قریب ہیں،کہا کہ  بدقسمتی سے ہمارے کچھ سیاسی دھڑے ایک طرف قوم پرستی اور اصلاح پسندی کے نعرے لگا رہے ہیں  اور دوسری طرف مزاحمتی گروہوں کے دشمن بھی ہیں جنہوں نے عراق اور عراقی عوام اور ان کے مقدسات کے راستے میں ہزاروں شہید اور زخمی دے ہیں۔
انھوں نے کہا کہ امریکہ عراقیوں کو آزادی دلانے کے بہانے2003 میں عراق میں داخل ہوا ہے اس وقت سے لے کر آج تک اس نے عراقیوں کی اقدار کو مائمال کرنے کے سوا انھیں کچھ نہیں دیا ہے۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम