Code : 2536 41 Hit

امریکہ روس پر مزید پابندیاں عائد کرنے کے درپے

امریکی سینیٹ روس کے تیل اور گیس کے شعبوں پر سخت پابندیاں عائد کرنے کی کوشش کررہی ہے۔

ولایت پورٹل:روئٹرز نیوزایجنسی کی رپورٹ کے مطابق امریکی سینیٹ کی خارجہ تعلقات کمیٹی کے ترجمان نے آج  اعلان کیا ہے کہ وہ اگلے ہفتے روس پر سخت پابندیاں عائد کرنے کے منصوبے پر ووٹنگ کریں گے،امریکی سینیٹ کے خارجہ تعلقات ، جہاں ری پبلیکن پارٹی کا قبضہ ہے امریکی انتخابات میں مداخلت اور یوکرین کے ساتھ تنازعہ کے بہانے 11 دسمبر کو روس پر مزید پابندیاں عائد کرنے پر غور کر رہے ہیں،اس منصوبے کو فروری میں ریپبلکن ہارڈ لائن سینیٹر لنڈسے گراہم اور ڈیموکریٹک سینیٹر باب مینینڈیز نے "کریملن عسکریت پسندی کے خلاف امریکی دفاع" کے قانون کے تحت پیش کیا تھا،روئٹرز کے مطابق ، اس منصوبے کے تحت روس کے تیل اور گیس کے شعبوں (جن میں سامان ، خدمات یا خام تیل نکالنے کے لئے درکار رقم کی فراہمی شامل ہے) پر سخت پابندیاں عائد کی جائیں گی ،قابل ذکر ہے کہ  ماسکو حکومت کی آمدنی کا تقریبا 40 فیصد انھیں اشیاء سے مہیا ہوتا ہے،یاد رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے حال ہی میں ایک انتظامی حکم نامے پر دستخط کرکے روس کے خلاف نئی پابندیاں عائد کردی ہیں، ٹرمپ نے انتظامی حکم میں امریکی وزیر خزانہ اور وزیر خارجہ کو ہدایت دی ہے کہ وہ روس کو قرض دینے نیز اس کو مالی اور تکنیکی امداد کی فراہمی بند کریں،ادھر ، روسی وزیر خزانہ انتون سلونوف کا کہنا ہے کہ روس پر نئی امریکی پابندیوں سے نہ صرف روس کو نقصان ہوگا بلکہ ماسکو اور واشنگٹن کے درمیان دوطرفہ تعلقات کو بھی نقصان پہنچے گا،قابل ذکر ہے کہ ٹرمپ جیسے جیسے 2020 میں ہونے والے امریکی صدارتی انتخابات کے قریب ہوتے جارہے ہیں  اپنے داخلی مخالفین کے دباؤ کو کم کرنے کے لئے ماسکو کے بارے میں سخت موقف اختیار کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम