امریکہ ہمارے اندورنی معاملات میں دخل اندازی کررہاہے؛روس

روسی حکام نے واشنگٹن پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ ان کے اندرونی معاملات میں دخل اندازی کررہا ہے۔

ولایت پورٹل:الجزیرہ  چینل کی رپورٹ کے مطابق  کریملن نے واشنگٹن کے اہلکاروں پر روس کے معاملات میں مداخلت کا الزام عائد کیا،کریملن نے کہا کہ ہم واشنگٹن کے ساتھ اپنے معاملات میں لچکدار ہونے کے لئے تیار ہیں،ہم واشنگٹن کے ساتھ معاملات میں لچکدار ہونے کے لئے تیار ہیں لیکن یہ کوئی مستقل مسئلہ نہیں ہے اور ہم توہین اور اپنی سرخ لکیروں  کے پار کرنے کو برداشت نہیں کریں گے،کریملن نے مزید کہاکہ ہم تمام فریقوں کا احترام کرتے ہیں، لیکن ہم اپنے ملک میں غیر قانونی احتجاج کے خلاف ہیں۔
یادرہے کہ  اس سے قبل بعض مغربی ذرائع نے دعویٰ کیا کہ کریملن کے نقاد ، الیکسی ناوالنی کی حمایت میں ایک ریلی کے دوران 3500 کے قریب مظاہرین کو حراست میں لیا گیا تھا جبکہ اس سے قبل ہی کریملن کے ترجمان دمتری پیسکوف نے منگل کو کہا تھا کہ روسی صدر ولادیمیر پوتن کا حزب اختلاف کے رہنما الیکسی ناوالنی کے معاملے میں مداخلت کا کوئی منصوبہ نہیں ہے اور انہیں اس میں ملوث ہونے کی ضرورت نہیں ہے، پریسکوف نے پریس سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ناوالنی کے دوران حراست میں ان کے حقوق کا احترام کیا جائے گا چونکہ قانون کے ذریعہ تمام روسی شہریوں کے حقوق کی ضمانت ہے۔ تاہم ، کریملن کے ترجمان نے کہا کہ ماسکو نالنی کیس سے متعلق دوسرے ممالک کے مطالبات پر عمل پیرا ہونے کا ارادہ نہیں رکھتا ہے۔
واضح رہے کہ  اس سے قبل یورپی یونین اور امریکہ میں بائیڈن حکومت نے روس سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ ناوالنی کو رہا کرے ، جو ان کی معطل سزا کی شرائط کی خلاف ورزی کے بعد گرفتار ہوئے تھے، الیکسی ناوالنی کو ماسکو کے شرمیٹیف ایئرپورٹ پہنچتے ہی روسی سکیورٹی فورسز نے حراست میں لیا تھا، روسی جیل انتظامیہ نے الیکسی ناوالنی کی گرفتاری کی تصدیق کردی ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین