فلسطینی مزاحمتی کارروائیاں رکنے والی نہیں؛صہیونی میڈیا کا اعتراف

صہیونی میڈیا نے حالیہ مہینوں میں مقبوضہ علاقوں میں فلسطینی مزاحمتی کارروائیوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ یہ کارروائیاں جاری رہیں گی۔

ولایت پورٹل:اسرائیلی چینل کان نے اپنی ایک رپورٹ میں حالیہ مہینوں میں مقبوضہ علاقوں میں فلسطینی مزاحمتی کارروائیوں کا اعتراف کیا جبکہ اسرائیلی سکیورٹی اداروں کا اندازہ ہے کہ فلسطینی مزاحمتی کارروائیوں کی موجودہ لہر 2022 کے آخر تک جاری رہے گی۔
رپورٹ کے مطابق مقبوضہ اراضی نے جمعرات کی شب ایک اور شہادت طلبانہ کارروائی بھی دیکھی، تل ابیب کے قصبے العاد میں ہونے والی اس کارروائی میں متعدد صیہونی ہلاک یا زخمی ہوئےجبکہ حماس اور جہاد اسلامی تنظیمیوں نے تل ابیب کے قریب ہونے والی مزاحمتی کارروائی پر مبارکباد دی ہے جس میں متعدد صیہونی ہلاک اور زخمی ہوئے۔
جہاد اسلامی تحریک کے سیاسی بیورو کے رکن محمد حامد نے کہا کہ ہم العاد علاقے میں بہادرانہ آپریشن پر مبارکباد پیش کرتے ہیں، جسے الاقصیٰ کی فتح سمجھا جاتا ہے،انہوں نے مزید کہا کہ صہیونی فوج اور آبادکاروں کی طرف سے مسجد الاقصی کی بے حرمتی تمام سرخ لکیروں کے خلاف جارحیت ہے اور ہماری قوم ان جارحیتوں کا جواب دیتی رہے گی۔
محمد حامد نے تاکید کی کہ دشمن کا خیال تھا کہ مغربی اور عرب سازشیں آزادی پسندوں کے غصے کو کم کر دیں گی لیکن قابضین جان لیں کہ فلسطینی عوام ہمیں یقین دلاتے ہیں کہ مسجد اقصیٰ میں ہونے والے جرائم اور اشتعال انگیز کارروائیوں کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین