Code : 2964 19 Hit

11 فروری کو فلسطین سے متعلق سلامتی کونسل کا اجلاس متوقع

اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے عبوری چیئرمین نے 11 فروری کو فلسطین سے متعلق سلامتی کونسل کا اجلاس منعقد کیے جانے کا اعلان کیا ہے۔

ولایت پورٹل:اقوام متحدہ کسلامتی کونسل کے عبوری چیئرمین مارک بیکسٹڈن ڈی بوٹسیویریو نے  ایک پریس کانفرانس کے دوران فروری میں سکیورٹی کونسل کے منصوبوں کا ذکر کرتے ہوئے ، کہاکہ11 فروری کو فلسطینی اتھارٹی کے صدر محمود عباس کی موجودگی میں سلامتی کونسل کا اجلاس منعقد ہوگا۔
انہوں نے مزید کہاکہ ابھی  تک کوئی باضابطہ درخواست اس سلسلہ میں داخل نہیں کی گئی ہے لیکن مجھے لگتا ہے کہ یہ درخواست آج ہم تک پہنچے جائےگی اور ہم اس جلسے کے انعقاد کے لئے تیار ہیں۔
ادھر بیلجیم کے اقوام متحدہ میں مستقل نمائندہ نے بھی امریکہ کی پیشکش پر مطالبہ کیا کہ اس کونسل کے ممبروں کو "صدی ڈیل" کے منصوبے کا جواز پیش کرنے کے لئے غیراعلانیہ اجلاس منعقدکیا جائے جس میں ک جارڈ کوچنر امریکی نمائندہ خصوصی کی حیثیت سے شرکت کریں ۔
بیکسٹڈن ڈی بوٹسیویریو نے  کہا ہے کہ یہ خفیہ اجلاس 6فروری کو جمعرات کے دن منعقد ہوگا۔
رپورٹ کے مطابق فلسطینی اتھارٹی ارادہ رکھتی ہے  کہ سلامتی کونسل کے ممبروں کے ساتھ مل کر "صدی ڈیل" کی مذمت کی ایک قرارداد منظور کی جائے ۔
تاہم  قیاس آرائیاں کی جارہی ہیں  اس منصوبے کے لئے امریکی دیرینہ حمایت کے پیش نظر فلسطینی  اتھارٹی کے اس منصوبہ کوامریکی ویٹو کا سامنا کرنا پڑے گا۔
اس کے بعد ایسا لگتا ہے کہ اس معاہدہ کے خلاف قرارداد پاس کروانے کے لیے فلسطین اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اور ہیومن رائٹس کونسل کی طرف رجوع کرے گا۔





0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम