عرب حکمراں اپنا تخت بچانے کے لئے اسرائیل کے تابع ہیں:جہاد اسلامی فلسطین

جہاد اسلامی فلسطین تحریک کے ایک ممتاز رہنما نے کہا کہ اسرائیلی وزیر اعظم کے سعودی عرب کے دورے سے خطے کی سلامتی اور استحکام پر منفی اثرات مرتب ہوں گے۔

ولایت پورٹل:المیادین نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق جہاد اسلامی فلسطین تحریک کے ممتاز رہنما داؤود شہاب نے اسرائیلی وزیر اعظم بنیامین نیتن یاہو کے سعودی عرب کے دورے اور سعودی ولی عہد محمد بن سلمان سے ملاقات کے نتائج سے خبردار کیا ہے، انہوں نے کہا ، "نیتن یاھو کا ناقابل اعتماد سعودی عرب دورہ فلسطینی عوام کے خلاف جارحیت شروع کرنے اور ان کے مقصد کو پامال کرنے کا پیش خیمہ ہے۔
فلسطینی رہنما نے مزید کہاکہ واشنگٹن اور تل ابیب خطے میں موجود مسائل کو صیہونی حکومت کے منصوبے کے حق میں ختم کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
انہوں نے کہاکہ صہیونی حکومت تعلقات کو معمول پر لانے کی سازش کے ذریعے خطے کا کنٹرول سنبھالنا چاہتی ہے۔
داؤد شہاب نے کہا کہ نیتن یاھو کا سعودی عرب کا دورہ یروشلم اور اسلامی اقدار کے ساتھ غداری ہے  اور عرب حکومتیں اپنا تخت برقرار رکھنے کے لئے تل ابیب کی سمت جا رہی ہیں۔
یادرہے کہ نیتن یاہو کے خفیہ دورہ سعودی عرب کی خبر کے انکشاف اور بن سلمان سے ان کی ملاقات نےعالم اسلام میں منفی رد عمل کی لہردوڑا دی ہے۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین