ٹیکساس کا امریکہ سے الگ ہونے کا منصوبہ

امریکی ریاست ٹیکساس کی ریپبلکن پارٹی نے ایک مسودہ تیار کیا ہے جس کے مطابق اس ریاست امریکی حکومت سے الگ کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

ولایت پورٹل:بزنس انسائیڈر ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق امریکی ریاست ٹیکساس کی ریپبلکن پارٹی امریکی وفاقی حکومت سے ٹیکساس کی علیحدگی کا فیصلہ کرنے کے لیے ریفرنڈم کرانے کی کوشش کر رہی ہے،رپورٹ کے مطابق ریپبلکن پارٹی نے اپنی تازہ ترین دستاویز کے مسودے میں امریکہ سے علیحدگی کا امکان ظاہر کیا ہے۔
دستاویز میں ٹیکساس کی ریپبلکن پارٹی نے 2023 میں ٹیکساس کی علیحدگی پر ریفرنڈم کرانے کا مطالبہ کیا، رپورٹ کے مطابق ریفرنڈم اس بات کا تعین کرے گا کہ آیا ٹیکساس کو ایک آزاد ریاست کے طور پر اپنی حیثیت کی توثیق کرنی چاہیے۔
بزنس انسائیڈر نے مزید لکھا کہ  ریاستی ریپبلکن پارٹی نے اپنے پلیٹ فارمز اور قراردادوں کی کمیٹی کی ایک دستاویز میں اس طرح کے ریفرنڈم کے لیے زور دینے کے اپنے ارادے کا اظہار کیا، جس میں اس نے اس مسئلے پر ووٹ کرانے کی اپنی خواہش کا اظہار کیا۔
رپورٹ کے مطابق دستاویز جس میں ریاست ٹیکساس کی آزادی کا ایک حصہ شامل ہے، ووٹ کا مطالبہ کرتا ہے اور ٹیکساس ریپبلکن پارٹی کے اس خیال کی وضاحت کرتا ہے کہ وفاقی حکومت نے ریاست کے خود مختاری کے حق کی خلاف ورزی  کی ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین