Code : 3306 24 Hit

دہشگردوں کی کورونا عالمی بحران سے ناجائز فائدہ اٹھانے کی کوشش

یورپ سمیت خطے کے کچھ ممالک میں سرگرم دہشت گرد تنظیمیں اپنے حملے دوبارہ شروع کرنے کے لئے عالمی سطح پر پھیلنے والی کورونا وبا کے نتیجہ میں پیش آنے والے حالات کا فائدہ اٹھانے کی کوشش کررہی ہیں۔

ولایت پورٹل:دنیا بھر کے متعدد ممالک  کی سکیورٹی اور انٹیلی جنس  تنظمیوں کا کہنا ہے کہ کورونا عالمی وبا کے نتائج صرف معاشی ، سیاسی ، مالی اور معاشرتی حالات تک ہی محدود نہیں ہیں ، کیونکہ اس وائرس سے نمٹنے میں فوجی اور سکیورٹی فورسز کی شمولیت   کی وجہ سے مسلح دہشت گرد گروہ ہنگامی حالت کا فائدہ اٹھا رہے ہیں اور دنیا کے متعدد علاقوں میں متحرک اور تکلیف دہ حفاظتی چوٹیں پہنچانے کی کوشش کررہے ہیں۔
جس کی حالیہ دنوں میں افریقی ممالک ،شام ، عراق اور فرانس میں نیز اس سے پہلے تیونس میں دہشت گردی کے حملوں کے دوبارہ شروع ہونے کی مثالیں دیکھنے کو ملتی ہیں۔
اس سلسلے میں  خطے اور دنیا کے متعدد انٹیلیجنس رہنماء تصادم کا مقابلہ  کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔
شام میں  داعش نے حالیہ دنوں میں متعدد حملے کیے ہیں جن میں دیر الزور کے مشرق میں واقع البوکمال صحرا میں معیزیله کے علاقے میں شامی فوج اوراس کی اتحادی فوجوں پر حملے شامل ہیں  جن کے نتیجہ  میں جمعرات کے روز  فاطمیون بٹالین کے تین اہلکار شہید اور بیس دیگر زخمی ہوئے۔
دو ہفتے قبل بھی شام کے مشرقی صوبے دیر الزور کے صحراء القوریه کے عین علی علاقے میں راکٹ حملے میں ایک شامی فوج کے اتحادی افواج کی ایک گشتی پارٹی کو نشانہ بنایا گیا  جس میں اس پارٹی کے تمام افراد شہید اور زخمی ہوگئے تھے۔
ادھر یہ بھی کہا جاتا ہے کہ داعش کے متعدد قیدی شام کے شہر الحسکہ میں واقع غواران جیل میں گذشتہ ہفتے ہونے والے ہنگامے کے بعد عراق فرار ہوگئے تھے۔
 
 


1
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम