Code : 3117 14 Hit

سوڈان کے عبوری وزیر اعظم کی اسرائیل کی حمایت کا انکشاف

سوڈان کی حکمراں عبوری کونسل کے ترجمان نے انکشاف کیا ہے کہ کونسل کے سربراہ نے سوڈانی وزیر اعظم عبداللہ ہمدوک کی ہم آہنگی کے ساتھ صہیونی وزیر اعظم سے سے ملاقات کی۔

ولایت پورٹل:الخلیج الجدید ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق سوڈان کی حکمراں عبوری کونسل کے ترجمان محمد الفکی سلیمان نے یوگنڈا میں وزیر اعظم عبد الفتاح البرہان اور صیہونی وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو کی ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ یہ ملاقات وزیر اعظم عبد اللہ ہمدوک کے تعاون سے ہوئی جبکہ کونسل کے اراکین کو اس کی اطلاع نہیں دی گئی۔
انہوں نے کہا کہ جب ہم نے اس ملاقات کے بارے میں سنا تو  ہم اس نتیجے پر پہنچے کہ یہ اقدام بین الاقوامی سیاست میں ہماری پوزیشن کو مضبوط بنا سکتا ہے۔
اس کےبعد  ہم نےاس ملاقات کا جائزہ لینے اور اس کوجانچنے کے لئے ہمدوک کی سربراہی میں ایک چھوٹی کمیٹی تشکیل دی جس میں سیکرٹری خارجہ اور مختلف سکیورٹی ایجنسیوں کے ممبران بھی شامل تھےاور ہماری سفارش یہ تھی کہ اگر یہ ملاقات سوڈان کے مفاد میں ہے اور بین الاقوامی حلقوں میں اس کی آواز سنائی دیتی  ہے تو اس میں کوئی رکاوٹ نہیں ہے۔
الفکی کے مطابقاس اجلاس کے بعد ایک کمیٹی تشکیل دی گئی تھی اور کونسل نے سفارش کی تھی کہ اگر اسرائیل کے ساتھ تعلقات سوڈان کے حق میں ہیں اور اگر بین الاقوامی حلقوں میں اس کی آواز سنائی دیتی ہے  تو ان کا قیام عمل میں لایا جاسکتا ہے۔
یادرہے کہ 3 فروری کو  یوگنڈا کے دارالحکومت میں متحدہ عرب امارات  کی ہم آہنگی کے ساتھ البرہان اور نیتن یاہو کی ملاقات ہوئی  جسے سوڈان کے اندر عوامی مظاہروں کا سامنا کرنا پڑا۔
اس ملاقات کے دو دن بعد  کانگو سے مقبوضہ فلسطین کے علاقوں کی طرف پرواز کرنے والا ایک مسافر بردار طیارہ M_ABGG سوڈانی فضائی حدود سے گذرتا ہوا گیا۔
 
 


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम