Code : 4046 14 Hit

عرب ممالک میں مداخلت بند کرؤ؛ متحدہ عرب امارات کا ترکی کو انتباہ

متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ نے ترکی کو عرب ممالک کے امور میں مداخلت کرنے پر انتباہ دیا ہے۔

ولایت پورٹل:روئٹرز نیوز ایجنسی کی روپورٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ انور قرقاش نے ہفتے کے روز کہا تھا کہ ترکی کو عرب ممالک کے معاملات میں مداخلت بند کرنی چاہئے، انہوں نے لیبیا کے بارے میں ترک وزیر دفاع کے اظہار خیال پر بھی تنقید کی۔
ترک میڈیا نے اس سے قبل لیبیا میں متحدہ عرب امارات کے تباہ کن کردار پر تنقید کرتے ہوئے ترکی  کے وزیر دفاع کے اس سلسلہ میں تبصرے کی اطلاع دی تھی واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات، مصر اورروس مشرقی لیبیا میں مقیم فوجی کمانڈر خلیفہ حفتر کی حمایت کر رہے ہیں جبکہ ترکی اقوام متحدہ کی تسلیم شدہ طرابلس حکومت کی حمایت کرتا ہے، انور قرقاش نے اپے ٹویٹر بیان میں کہا  ہے کہ آج تعلقات خطرات سے نبھتے ہیں  اور آج کے زمانے میں سامراجی خرافات اور فریب کاریوں کی کوئی جگہ نہیں ہے۔
واضح رہے کہ لیبیا میں ڈیکٹیٹر قذافی کی حکومت کے خاتمہ کے کچھ ہی عرصہ بعد امریکہ ،اسرائیل اور برطانیہ کی پالیسیوں کے مطابق اس ملک کو دوحصوں میں تقسیم کردیا گیا ،ایک حصہ مشرقی لیبیا جس پر امریکہ اور اسرائیل کے حامی اور مدد گار فوجی جنرل خلیفہ حفتر نے اس ملک کی قانونی حکومت کے خلاف بغاوت کر کے قبضہ کرلیا اور طرابلس کی حکومت پر دباؤ ڈالنے کے لیے کئی حال ہی میں ایک شہر کی طرف جانے والی پانی کی سپلائی بند کر دی جس کے عوام کو سخت پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔
قابل ذکر ہے کہ امریکہ اور خاص طور پر اسرائیل خلیفہ خفتر کی خفیہ امداد کرتے ہیں  کیونکہ ان کے خیال میں اگر یہ فوجی جنرل لیبیا پر قابض ہوجاتا ہے تو لیبیا کا خطرہ ہمیشہ کے لیے ان کے سروں سے ٹل جائے گا جیسا کہ  متعدد صیہونی عہدہ دار اس کا اعتراف کرچکے ہیں۔




0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین