متعدد ممالک کی صیہونی سافٹ وئیر کے ذریعہ اپنے عوام کی جاسوسی

ذرائع ابلاغ نے دنیا بھر کی مختلف حکومتوں کے ذریعہ صیہونی سافٹ ویئر کو استعمال کرتے ہوئے اپنے مخالفین ،سماجی کارکنوں  اور صحافیوں کی جاسوسی کرنے کا انکشاف کیا ہے۔

ولایت پورٹل:القدس العربی اخبارکی رپورٹ کے مطابق ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ متعدد حکومتوں نے صہیونی گروپ کے تیار کردہ انٹلی جنس پروگرام کا استعمال کرتے ہوئے مقبوضہ علاقوں ، فلسطین ، لبنان، یمن، سعودی عرب اور ترکی سمیت دنیا بھر کے سیاستدانوں ، حزب اختلاف ، صحافیوں ، ماہرین تعلیم اور انسانی حقوق کے کارکنوں کی جاسوسی کی ہے،سائبر اسپیس ہیومن رائٹس گروپ مائیکرو سافٹ اور سٹیزن لیب نے اعلان کیا ہے کہ کینڈیرو نامی ایک اسرائیلی کمپنی نے ایسا سافٹ ویئر فروخت کیا ہے جو ونڈوز آپریٹنگ سسٹم میں داخل ہو سکتا  ہے،مائیکروسافٹ اور سٹیزن لیب کے سکیورٹی عہدہ دار کے پیغامات کے مطابق اس طاقتور سائبر ہتھیار نے دنیا بھر میں 100 سے زائد افراد کو نشانہ بنایا ہے۔
یونیورسٹی آف ٹورنٹو سے وابستہ انفارمیشن ریسرچ انسٹی ٹیوٹ سٹیزن لیب نے ایک بیان میں کہا ہے کہ کینڈیرو ایک کمپنی ہے جو خفیہ طور پر کمپیوٹر سافٹ ویئر اور آپریٹنگ سسٹم  کو ہیک کرنے کے لئے سمارٹ ٹولز فروخت کرتی تھی،مائیکرو سافٹ اور سٹیزن لیب کےذریعہ مشترکہ طور پر کی جانے والی اس تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ کس طرح کینڈیرو مصنوعات کو دنیا بھر کی خفیہ مارکیٹ میں فروخت کیا جاتا ہے  اور ان مصنوعات کے خریدار  جو اکثر سکیورٹی ایجنسیاں ہیں ، اپوزیشن کے مواصلاتی نیٹ ورک  اور حکومت مخالف میڈیا کو توڑنے کے لئے اس ٹیکنالوجی کا استعمال کرتے ہیں ۔
مائیکرو سافٹ نے یہ بھی کہا کہ اس نے فلسطین ، اسرائیل ، لبنان ، یمن ، اسپین ، برطانیہ ، ترکی ، آرمینیا اور سنگاپور میں اس پروگرام کے متاثرین کی شناخت کی ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین