رواں سال کے آغاز سے اب تک صیہونیوں کے ہاتھوں 474 فلسطینی مکانات مسمار؛اقوام متحدہ کی رپورٹ

اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ صیہونی حکومت نے رواں سال کے آغاز سےاب تک 474 فلسطینی مکانات کو تباہ کردیا ہے۔

ولایت پورٹل:اقوام متحدہ کے انسانی امور کے کوآرڈینیشن دفتر (او سی ایچ اے) نے ایک بیان میں کہا ہے کہ صیہونیوں نے رواں سال کے آغاز سے لے کر اب تک مغربی کنارے میں لگ بھگ 474 فلسطینی مکانات کو تباہ کردیا ہے،بیان میں مزید کہا گیاہے کہ اسرائیل کی تباہ کن کاروائیوں کے نتیجے میں  359 بچوں سمیت 656 فلسطینی بے گھر ہوگئے ہیں، رپورٹ کے ایک اور حصے میں بتایا گیا ہے کہ رواں ماہ (جولائی) میں الغوارکے علاقے میں واقع راس التین الرعوی محلے میں صیہونی حکومت کے جارحانہ اقدامات کی وجہ سے 84 فلسطینی اپنے گھروں سے محروم ہوگئے ہیں۔
واضح رہے کہ اسرائیلی فورسز نے حال ہی میں مقبوضہ بیت المقدس میں محمد نصار الحسینی نامی ایک فلسطینی شہری کو اپنا مکان مسمار کرنے پر مجبور کیا،اس فلسطینی شہری کا گھر سلوان کے علاقے میں واد قدوم میں تھا ، صیہونیوں نے انہیں دھمکی دی کہ اگر انھوں نے اپنا مکان تباہ نہیں کیا تو صہیونی حکومت کی طرف سے مسمار کیے جانے میں جو خرچہ آئے گا وہ انھیں خود ادا کرنا پڑے گا۔
واضح رہے کہ صہیونی حکومت غیرقانونی تعمیر کا بہانہ بنا کر مقبوضہ بیت المقدس کے مختلف علاقوں میں فلسطینیوں کے مکانات کو تباہ کررہی ہے اور پوری عالمی برادری خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے جس کی صیہونیوں کو مزید جرئت ملتی ہے۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین