Code : 2853 22 Hit

شہید سلیمانی جنرل سلیمانی سے زیادہ مزاحمتی تحریک کو مستحکم کریں گے

مزاحمتی تحریک کو استحکام بخشنے میں شہید سلیمانی کا جنرل سلیمانی سے زیادہ اثر ہوگا ،شہید اس تحریک کو آگے بڑھانے میں اہم رول ادا کریں گے۔

ولایت پورٹل:اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ کے سیاسی مشیر عباس عراقچی نے الحاج شہید قاسم سلیمانی کے قتل کی سیاسی اور اسٹریٹجک جہتوں سے متعلق اجلاس میں جنرل سلیمانی کی شہادت پر اظہار تعزیت کرتے ہوئے فاتحہ خوانی کی اور کہا کہ امریکیوں نے اس دہشتگردانہ کارروائی میں جو اسٹریٹجک غلطی کی ہے وہ مغربی ایشین خطے اور خلیج فارس میں ایک اہم موڑ پیدا کرے گی اور اس کے جغرافیائی اور اسٹریٹجک نتائج برآمد ہوں گے، انہوں نے مزید کہا: سردار سلیمانی کی شہادت اور ایران کے میزائل ردعمل سے علاقائی اسٹریٹجک مساوات اور تعلقات متاثر ہوئے ہیں، سردار سلیمانی کی شہادت نے مزاحمتی تحریک ، تکفیری اور داعش دہشت گردی نیزمغربی ایشیاء اور خلیج فارس میں ایران اور امریکہ کی طاقت کے معادلات کو متاثر کیا ہے،عراقچی نے مزید کہا کہ جنرل سلیمانی کا ہمارے درمیان سے چلے جانا یقینا ایک بڑا نقصان ہے ،ہم نے اپنا ایک اہم کمانڈر کھو دیا ہے لیکن مزاحمتی تحریک کا جذبہ اور ولولہ اپنی جگہ باقی ہے بلکہ اس میں مزید اضافہ ہوا ہےاور وہ پہلے سے زیادہ مضبوط ہوا ہے،انھوں نے مزید کہا کہ میں یقین سے کہہ سکتا ہوں کہ مزاحمتی تحریک کو استحکام بخشنے میں شہید سلیمانی کا جنرل سلیمانی سے زیادہ اثر ہوگا ،شہید اس تحریک کو آگے بڑھانے میں اہم رول ادا کریں گے۔


0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम