سعودی شاہی دربار کے متعدد آفیسر بدعنونی کے الزام میں گرفتار

سعودی شاہی دربار سے وابستہ متعدد افسروں اور افراد کو بدعنوانی کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے۔

ولایت پورٹل:سعودی سرکاری نیوز ایجنسی نے اطلاع دی ہے کہ بدعنوانی کے الزام میں سعودی شاہی دربار سے وابستہ متعدد افسران اور عملے کو گرفتار کیا گیا ہے، رپورٹ کے مطابق رائل گارڈز کے 3 افسران بدعنوانی کے مقدمات میں ملوث تھے اور ان پر الزام ہےکہ انھوں نے اپنے اثر و رسوخ اور مقام کا استعمال کرتے ہوئے ملک کے اندر اور باہر رئیل اسٹیٹ کی خرید و فروخت کے عمل میں حصہ لے کر غیر قانونی جائیداد حاصل کی ہے  جس میں 400 ملین سعودی ریال کا غبن بھی شامل  ہے۔
 نیز ، شاہی دربار سے وابستہ ایک سابق ملازم نے اس سیکشن سے متعلق جائیداد کے معاملات اور لائسنس سازی میں مالی اور انتظامی خلاف ورزیوں کا ارتکاب کیا ہے،یادرہے کہ کچھ ماہ قبل بھی سعودی ٹیلی ویژن نے اعلان کیا تھا کہ بدعنوانی کے الزام میں سعودی فوجی عہدیداروں اور افسران کے ایک گروپ کو گرفتار کیا گیا ہے،سعودی کارکنوں کا کہنا ہے کہ حراست میں لیے جانے والوں میں سعودی پارلیمنٹ کے ممبر اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے قریبی ساتھی عیسیٰ الغیث بھی شامل ہیں، اس خبر کے بعد  سعودی کارکنوں نے بدعنوانی کے خلاف جنگ کی ضرورت کے بارے میں الغیث کے بیان کو دوبارہ شائع کیا۔


0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین