صیہونی فوجی درندوں کے ہاتھوں متعدد فلسطینی شہری گرفتار

اسرائیلی فورسز نےالخلیل شہر پر ایک نئے حملے میں متعدد فلسطینی شہریوں کو بغیر کسی الزام کے حراست میں لیا۔

ولایت پورٹل: العہد نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مقبوضہ علاقوں میں فلسطینی شہریوں کے خلاف صہیونیوں کی مخالفانہ کاروائیاں بدستور جاری ہیں، صیہونی عسکریت پسندوں نے لگاتار دوسرے دن مغربی کنارے کے الخلیل شہر پر حملہ کیا، رپورٹ کے مطابق صہیونی عسکریت پسندوں نے الخلیل شہر پر حملہ کرنے کے بعد فلسطینیوں کے گھروں پر دھاوا بول دیا اور ان کے ساتھ مارپیٹ کی جبکہ متعدد فلسطینی شہریوں کو بھی بغیر کسی الزام کے حراست میں لیا۔
واضح رہے کہ صہیونی حکومت نے مغربی کنارے میں واقع الخیل شہر پر وحشیانہ حملہ کیا ، جبکہ انھوں نےگذشتہ روزبھی اسی شہر پر حملے میں متعدد فلسطینی شہریوں کو غیر قانونی طور پر حراست میں لیا تھا۔
دریں اثنا  اسرائیلی فوج نے گذشتہ ایک ماہ کے دوران مقبوضہ فلسطین کے مختلف علاقوں میں فلسطینیوں کے خلاف کریک ڈاؤن تیز کیا ہے، تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق صیہونیوں نے گذشتہ اکتوبر میں مقبوضہ علاقوں کے مختلف علاقوں میں 410 فلسطینیوں کو حراست میں لیا ہے، اس سلسلے میں  فلسطینی قیدیوں کے مطالعے کے مرکزنے اعلان کیاہے کہ گرفتار کیے جانے والوں میں 46 فلسطینی بچے بھی شامل ہیں، یہ بھی بتایا جاتا ہے کہ متعدد فلسطینی صحافیوں کو گذشتہ ماہ کے دوران صہیونی عسکریت پسندوں نے حراست میں لیا تھا۔

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین