Code : 2766 157 Hit

امریکہ سے زیادہ آل سعود پر ایران کے انتقام کا خوف طاری

کچھ سعودی شہزادوں کے اہل خانہ ایرانی ردعمل کے خوف سے سعودی عرب روانہ ہوگئے۔

ولایت پورٹل:یمنی پریس ویب سائٹ نے سعودی ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ کچھ سعودی شہزادوں کے اہلخانہ کئی روز سے یورپ روانہ ہو رہے ہیں،باخبر ذرائع کے مطابق ، یہ خاندان میڈیا سے دور اور خفیہ طور پر ریاض ، جدہ اور مکہ کے ہوائی اڈوں سے متعدد یورپی ممالک کی طرف جارہےہیں،یادرہے کہ سعودی شہزادوں کے اہل خانہ کا یہ اقدام اس وقت سامنے آیا جب سعودی عرب میں امریکی سفارتخانے نے ریاض کو سعودیتیل تنصیبات خصوصا مشرقی سعودی عرب میں نشانہ بنائے جانے کی وارننگ دی،یمنی پریس نے مزید کہا کہ ان کے اس اقدام کی وجہ امریکہ کے ہاتھوں قدس فورس کے کمانڈر قاسم سلیمانی ، اور الحشد الشعبی کے نائب کمانڈر ابو مہدی المہندس کے قتل کے بارے میں ایران کے رد عمل کا خدشہ ہے،واضح رہے کہ ایران کے اسلامی انقلاب کے اعلی رہبر آیت اللہ سید علی خامنہ ای نے اور دیگرایرانی عہدیداروں نے انتباہ  دیا ہے کہ ایران بدلہ لے گا اور امریکی کارروائی کا جواب دے ضرور دے گانیز انھوں نے انتباہ دیا ہے کہ  اس جرم کی قیمت خطے سے امریکی فوجی انخلاء ہے،قابل ذکر ہے کہ شہید سردار سلیمانی اور ان کے ساتھیوں کے خون کا بدلہ لینے کے ایران کے وعدے نے امریکیوں اور ان کے علاقائی اتحادیوں کے دلوں میں خوف و ہراس کی لہر دوڑا دی  ہے،اس سلسلہ میں سعودی عرب کے نائب وزیر دفاع خالد بن سلمان کی سربراہی میں ایک سعودی وفد  اس معاملے پر تبادلہ خیال کے لئے آج (منگل) امریکہ پہنچ گیا ہے،خالد نے اس دورہ میں  امریکی وزیر خارجہ سے ملاقات کی،خالد بن سلمان نے اس ملاقات کے بعد کہا کہ انھوں  نے امریکی وزیر خارجہ مائک پومپیو سے خطے میں سلامتی اور امن کو برقرار رکھنے کے لئے مختلف امور پر تبادلۂ خیال کیا۔







0
شیئر کیجئے:
फॉलो अस
नवीनतम