Code : 2951 52 Hit

سعودی حکام سعودی نواز یمنی وزرا کو بھی ویزا نہیں دےرہے:یمن

سعودی اور متحدہ عرب امارات کی پالیسیوں پر تنقید کرنے والےیمن کی مستعفی حکومت کے ایک وزیر نے کہا ہے کہ سعودی عرب کئی مہینوں سےانھیں اور دیگر عہدیداروں کو ویزا دینے سے انکار کررہا ہے۔

ولایت پورٹل:یمن کی مستعفی حکومت کےوزیر ٹرانسپورٹ نے اتوار کے روز اعلان کیا کہ سعودی عرب سالوں سے ریاض فرار ہونے والے یمن کی مستعفی صدر عبد ربہ منصور ہادی سے ملنے کے لئے انھیں سعودی عرب میں داخل ہونے کا ویزا دینے سے انکار کر رہا ہے۔
یادرہے کہ منصور ہادی کی حکومت ،یمن کی مستعفی حکومت سمجھی جاتی ہے لیکن خود کو اس ملک کی جائز حکومت کہتی ہے اور سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض قیام پذیرہے۔
صالح الجبوانی نے اتوار کی شب اپنے ٹویٹر پیج پر اس خبر کو جاری کرتے ہوئے کہا کہ  ہمیں سیاسی اور سماجی خدمات کی رپورٹ پیش کرنے کے لیے  منصور ہادی  سےملاقات کرنے کی ضرورت ہے  لیکن ہمیں مہینوں سے ویزا نہیں مل سکا ہے۔
 من کےمذکورہ وزیر نے سعودی ولی عہد  کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ محترم شہزادہ محمد بن سلمان ، یا تو یمنی حکومت کے ممبروں کو سعودی عرب آنے جانے کی آزادی دی جائے یاپھرہمارے صدر کو واپس وطن بھیج دیا جائے۔
قابل ذکر ہے کہ جنوری کے اوائل میں منصور ہادی کی حکومت کے ایک ذرائع نے خبر دی تھی کہ صالح الجبوانی نے یمن کی بندرگاہوں ، ہوائی اڈوں اور سڑک میں توسیع کرنے کے لئے ترک حکومت کے ساتھ طے پانے والے معاہدوں کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا ۔
یادرہے کہ الجبوانی منصور ہادی کی معزول حکومت کے عہدے داروں میں سے ایک ہیں ، جنہوں نے یمن کے خلاف پانچ سالہ سعودی جارحیت اور ان کی  متحدہ عرب امارات کی شراکت دارانہ پالیسیوں پر سر عام تنقید کی ہے۔
 

0
شیئر کیجئے:
ہمیں فالو کریں
تازہ ترین